Friday , August 18 2017
Home / Top Stories / بی رام موہن گریٹر حیدرآباد کے مئیر اور فصیح الدین ڈپٹی میئر

بی رام موہن گریٹر حیدرآباد کے مئیر اور فصیح الدین ڈپٹی میئر

ٹی آر ایس کے نو منتخب کارپوریٹرس اور با اعتبار عہدیداران کے اجلاس میں آج فیصلہ
حیدرآباد۔/10فبروری، ( سیاست نیوز) گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن کے نئے میئر کا 11فبروری کو انتخاب عمل میں آئے گا۔ تلنگانہ راشٹرا سمیتی کو بلدی انتخابات میں تاریخی کامیابی کے بعد گزشتہ چند روز سے میئر اور ڈپٹی میئر کے انتخاب میں تجسس پایا جاتا تھا۔ تاہم آج شام ریاستی  چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے میئر گریٹر حیدرآباد کیلئے بی رام موہن اور ڈپٹی میئر کیلئے بابا فصیح الدین کے ناموں کو منظوری دے دی ہے۔ امکان ہے کہ 11فبروری بروز جمعرات صبح 8 بجے تلنگانہ بھون میں نو منتخب ٹی آر ایس کارپوریٹرس کا اہم اجلاس منعقد ہوگا جس میں ان دونوں پر رضامندی ظاہر کی جائے گی۔ اس اجلاس میں ڈپٹی چیف منسٹر محمود علی، وزیر داخلہ نرسمہا ریڈی اور ریاستی وزیر پنچایت راج کے ٹی راما راؤ بھی شرکت کریں گے جس کے بعد 11بجے بلدیہ کے صدر دفتر واقع ٹینک بنڈ پر بلدی کارپوریٹرس کے اجلاس میں کمشنر، دیگر قائدین، عہدیداروں کی موجودگی میں میئر حیدرآباد کی حیثیت سے بی رام موہن کا انتخاب عمل میں آئے گا۔ بلدیہ کے ہیڈکوارٹرس میں میئر کے انتخاب کیلئے تیاریاں زور وشور سے جاری ہیں۔  بی رام موہن اور بابا فصیح الدین دونوں کا تعلق تلنگانہ راشٹرا  ودیارتھی سنگھم سے ہے اور ان دونوں قائدین نے تحریک تلنگانہ میں اپنا زبردست رول ادا کیا اور طلباء برادری میں یہ لوگ کافی اثر رکھتے ہیں۔ ڈپٹی میئر کیلئے بابا فصیح الدین کے نام کو قطعیت دیئے جانے کا ’ سیاست‘ نے انکشاف کیا تھا۔اس موقع پر بابا فصیح الدین نے بتایا کہ انہیں جس بھروسہ کے تحت یہ ذمہ داری دی گئی اس کو وہ بخوبی نبھائیں گے اور چیف منسٹر کے سی آر اور وزیر کے ٹی آر کا بھروسہ قائم رکھیں گے۔ انہوں نے اس موقع پر ریاستی وزیر کے ٹی آر سے اظہار تشکر کیا اور کہا کہ انہیں عوامی خدمات کا ایک بہت بڑا موقع حاصل ہوا ہے۔ وہ شہر حیدرآباد کو عالمی معیار کا شہر بنانے کی چیف منسٹر کی کوششوں کو کامیاب بنانے میں اہم رول ادا کریں گے اور شہریوں کیلئے سہولت بخش خدمات کی فراہمی کو اولین ترجیح دیں گے۔ بابا فصیح الدین ریاستی وزیر پنچایت راج کے ٹی آر کے بااعتماد رفیق جانے جاتے ہیں، اور بابا فصیح الدین کے انتخاب سے تلنگانہ راشٹرا سمیتی  نے اقلیتوں میں مزید مقبولیت حاصل کرلی ہے۔ گریٹر حیدرآباد کے حدود میں رائے دہی کا حق رکھنے والے ارکان پارلیمنٹ ، اسمبلی اور کونسل کو بھی اجلاس میں شرکت کی دعوت دی گئی ہے۔ ٹی آر ایس نے 150 رکنی بلدیہ میں 99 نشستوں پر کامیابی کے ذریعہ واضح اکثریت حاصل کرلی ہے اور میئر و ڈپٹی میئر کے عہدوں پر ٹی آر ایس امیدواروں کی کامیابی یقینی ہے۔ گریٹر حیدرآباد بلدیہ میں بااعتبار عہدہ ارکان کی تعداد 67 ہے اور میئر کے عہدہ کیلئے 109 ارکان کی تائید ضروری ہے اور ٹی آر ایس کے پاس درکار تعداد موجود ہے۔ پارٹی ذرائع کے مطابق چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے قریبی رفقاء کے ساتھ مشاورت کرتے ہوئے میئر کے عہدہ کیلئے پارٹی امیدوار کے نام کو قطعیت دیدی ہے، جس کا اعلان اجلاس میں کیاجائیگا۔

TOPPOPULARRECENT