Wednesday , September 20 2017
Home / جرائم و حادثات / تالاب کٹہ میں کمسن لڑکی کی عصمت ریزی اور قتل کا ملزم گرفتار

تالاب کٹہ میں کمسن لڑکی کی عصمت ریزی اور قتل کا ملزم گرفتار

حیدرآباد ۔ /21 اگست (سیاست نیوز) بھوانی نگر تالاب کٹہ کی کم عمر لڑکی ہدیٰ بیگم عرف نوشین کے بہیمانہ قتل میں ملوث قاتل دستگیر کی گرفتاری کا آج پولیس نے اعلان کردیا اور اسے میڈیا کے روبرو پیش کیا گیا۔ کمشنر پولیس حیدرآباد مسٹر ایم مہیندر ریڈی نے پرانی حویلی کمشنر آفس میں منعقدہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے بتایا کہ دستگیر نے لڑکی کو برے ارادوں سے اپنا نشانہ بنانے کیلئے موقع کی تلاش میں تھا ۔ 11 اگست کی شام  ہدیٰ بیگم اپنے مکان سے گوشت خریدنے کیلئے روانہ ہوئی تھی اور دستگیر نے لڑکی کو تنہا دیکھ کر اسے لبھاتے ہوئے دھوکہ سے اسی علاقہ میں واقع زیر تعمیر عمارت میں لے گیا جہاں پر وہ اسے اپنی حوس کا نشانہ بنانے کی کوشش کی۔ لڑکی نے مدد کیلئے چیخ و پکار کی اور اپنی گھناونی حرکت کا پردہ فاش ہونے کے خوف سے دستگیر نے لڑکی کو اسکارف سے گلہ گھونٹ کر قتل کردیا اور بعد ازاں نعش کو سمپ میں پھینک دیا۔ دو دن بعد لڑکی کی مسخ شدہ نعش پولیس کو برآمد ہوئی۔ مسٹر مہیندر ریڈی نے بتایا کہ دستگیر نے قتل کے دن گولی پورہ میں واقع ماتا وائینس (شراب کی دکان) پر شراب نوشی کے بعد وہ تالاب کٹہ واپس لوٹ کر لڑکی کی تلاش میں تھا۔ کمشنر پولیس نے بتایا کہ 11 اگست کو ہدیٰ بیگم اچانک لاپتہ ہونے کے سبب بھوانی نگر پولیس نے مقدمہ درج کر کے تحقیقات کا آغاز کیا تھا اور علاقہ میں نصب کئے گئے سی سی ٹی وی کیمرے کے فٹیج اور دیگر تکنیکی شواہد کی مدد سے دستگیر کے ملوث ہونے کا پتہ لگاکر اس کی تلاش شروع کردی۔ انہوں نے بتایا کہ قتل کے دوسرے دن دستگیر لڑکی کی تدفین میں شامل تھا تاکہ وہ شبہ کے دائرہ سے باہر رہے لیکن وہ اچانک لاپتہ ہوگیا اور پولیس نے شبہ کی بنیاد پر اس کی تلاش شروع کردی تھی۔ مسٹر مہیندر ریڈی نے بتایا کہ دستگیر بری عادتوں کا عادی ہے اور بھوانی نگر پولیس نے 18 مارچ کو اسے قمار بازی میں ملوث ہونے پر گرفتار کیا تھا۔ وہ اکثر تالاب کٹہ علاقہ میں مقامی عوام کو چاقو کی نوک پر رقم وصول کیا کرتا تھا لیکن اس کے خوف سے عوام پولیس میں شکایت کرنے سے گھبراتے تھے۔ دستگیر کو گرفتار کر کے اسے آج عدالت میں پیش کیا گیا اور بعد ازاں جیل منتقل کیا گیا۔ کمشنر پولیس نے یہ بتایا کہ پولیس اس کیس میں جلد از جلد چارج شیٹ داخل کرنے کی ہر ممکن کوشش کرے گی تاکہ فاسٹ ٹریک کورٹ میں قاتل کو سخت سے سخت سزا مل سکے۔

TOPPOPULARRECENT