Tuesday , October 17 2017
Home / Top Stories / تحفظات کے لیے مسلمانوں میں شعور بیداری ’’ سیاست ‘‘ کی مہم کا نتیجہ

تحفظات کے لیے مسلمانوں میں شعور بیداری ’’ سیاست ‘‘ کی مہم کا نتیجہ

ضلع سنگاریڈی کے مسلم قائدین کا اظہار خیال ، نیوز ایڈیٹر جناب عامر علی خاں کو تہنیت کی پیشکشی

سنگاریڈی ۔ 17 ۔ دسمبر : ( سیاست نیوز) : تلنگانہ مسلمانوں کو 12 فیصد تحفظات کی فراہمی کے مسئلہ پر تلنگانہ اسٹیٹ کمیشن فار بیاک ورڈ کلاس نے 14 تا 17 دسمبر عوامی سماعت منعقد کی بی سی کمیشن عوامی سماعت کے آج آخری دن ضلع سنگاریڈی کے نارائن کھیڑ ، ظہیر آباد ، اندولی ، پٹن چیرو اور سنگاریڈی اسمبلی حلقہ جات سے بڑی تعداد میں مسلمانوں نے بی سی کمیشن سے 12 فیصد تحفظات کی فراہمی کے حق میں نمائندگی کی مسلم ریزرویشن فرنٹ کمیٹی ضلع سنگاریڈی کا وفد جو الحاج محمد خواجہ چیرمین کمیٹی ، ایم اے سمیع جنرل سکریٹری ، معراج خان ہاشمی نائب ، محمد ارشد الدین ایڈوکیٹ کنوینر ، ایم اے عزیز سابق کونسلر ، محمد جاوید اور ایم اے رحمن پر مشتمل تھانے بی سی کمیشن چیرمین بی ایس راملو اور اراکین کمیشن سے تحریری نمائندگی کی اور مسلمانوں کو 12 فیصد تحفظات فراہم کرنے کا مطالبہ کیا ۔ حلقہ اسمبلی سنگاریڈی کے ٹی آر ایس پارٹی مسلم قائدین 6 موٹر گاڑیوں کے قافلے ساتھ دفتر بی سی کمیشن پہنچے ۔ ایم اے حکیم ایڈوکیٹ و سینئیر قائد ٹی آر ایس پارٹی نے مسلم ویلفیر کمیٹی سنگاریڈی کی جانب سے نمائندگی کی ۔ ایم اے سبحان نائب صدر زرعی مارکٹ کمیٹی سنگاریڈی ، محمد خواجہ خاں صدر درگاہ کمیٹی ، ایم اے صمد جنرل سکریٹری درگاہ کمیٹی ، خواجہ اسد اللہ ، محمد امیر الدین کوآپشن ممبر ضلع پریشد ، محمد خواجہ ، محمد شرف الدین ، محمد عرفان ، محمد اعظم ، محمد لیاقت علی ، محمد عثمان ، محمد عظمت ، محمد یاور ، محمد عظیم اور دیگر نے بی سی کمیشن سے نمائندگی یونائٹیڈ مسلم کونسل سنگاریڈی کا وفد شیخ وسیع الدین حافظ شیخ عارف ، محمد ناہید ، محمد نصیب ، محمد خواجہ اور محمد رضی الدین پر مشتمل تھا نے بی سی کمیشن سے نمائندگی کرتے ہوئے مسلمانوں کو پسماندگی کے بنیاد پر تحفظات فراہم کرنے کی سفارش کرنے کا مطالبہ کیا ۔ محمد اشفاق حسین سہیل صدر ہیومن ویلفیر فاونڈیشن و خدمت بینک ، سدا سیو پیٹ ، سید رافع التمش صدر ڈسٹرکٹ ایجوکیشنل ڈیولپمنٹ سوسائٹی ، محمد اکرم علی عمر صدر خواجہ غریب نواز ویلفیر سوسائٹی سنگاریڈی ، محمد حاجی علی صدر پریس کلب سدا سیو پیٹ ، عبدالغنی سکریٹری الامین ایجوکیشنل سوسائٹی اور پون کمار صدر یوتھ کانگریس سدا سیو پیٹ نے جناب عامر علی خاں نیوز ایڈیٹر روزنامہ سیاست حیدرآباد سے ملاقات کرتے ہوئے 12 فیصد مسلم تحفظات کے لیے ریاست گیر ، بے لوث و بے باکانہ شعور بیداری مہم چلانے پر گلپوشی کی اور کہا کہ بی سی کمیشن کا قیام دراصل جناب عامر علی خاں کی مہم کا نتیجہ ہے ۔

وفد نے جناب عامر علی خاں کو مبارکباد بھی پیش کی اور کہا کہ روزنامہ سیاست ہمیشہ ملت اسلامیہ کی رہنمائی اور مسائل کی یکسوئی کے لیے سرگرم رہتا ہے ۔ 12 فیصد تحفظات کی شعور بیداری مہم کے تحت سدا سیو پیٹ اور سنگاریڈی میں احتجاجی دھرنا ، بھوک ہڑتال کیمپس ، جلسے اور گروپ میٹنگس کے علاوہ ضلع کلکٹر کو 100 سے زائد نمائندگیاں کی گئیں ۔ قبل ازیں جناب محمد اکرم علی عمر صدر خواجہ غریب نواز ویلفیر سوسائٹی سنگاریڈی ، جناب محمد حاجی علی صدر ، پریس کلب سدا سیو پیٹ تعلقہ جناب محمد اشفاق پٹیل لاہوٹی صدر ہیومن ویلفیر فاونڈیشن ضلع سنگاریڈی جناب سید رافع التمش صدر ڈسٹرکٹ ایجوکیشنل ڈیولپمنٹ کمیٹی سدا سیو پیٹ ، انتظامی کمیٹی جدید عید گاہ سدا سیو پیٹ وفد جو سید مسعود سابق کونسلر ، ظہیر پٹیل اور محمد اکبر حسین صدر پر مشتمل تھا ۔ محمد عبدالغنی صدر الامین ایجوکیشنل سوسائٹی سدا سیو پیٹ ، پون کمار صدر یوتھ کانگریس سدا سیوپیٹ ، محمد وحید ، محمد شفیع صدر ٹی آر ایس اقلیتی سیل سدا سیو پیٹ ، ویمن ویلفیر اسوسی ایشن سدا سیو پیٹ اور خدمت بینک سدا سیو پیٹ کی جانب سے آج بی سی کمیشن کو علحدہ علحدہ نمائندگی کرتے ہوئے بتایا کہ مسلمان سیاسی ، سماجی ، تعلیمی اور معاشی طور پر ایس سی اور ایس ٹی طبقات سے بھی پسماندہ ہیں ۔ 95 فیصد مسلمان غریب ہیں اور چھوٹے کاموں کے ذریعہ اپنی زندگی بسر کرتے ہیں ۔ مسلمان یکساں مواقع سے محروم ہیں اور بیشتر جگہوں پر ان سے انصاف نہیں کیا جاتا مسلمانوں میں سماجی محرومی تیزی سے بڑھ رہی ہے ۔ سدھیر کمیشن نے اپنی رپورٹ میں بتایا کہ تقریبا 90 فیصد مسلمان پہلے ہی بی سی اے ، بی سی ، بی اور بی سی ای طبقات میں تحفظات حاصل کررہے ہیں ۔ چنانچہ ان کے فیصد تحفظات کو 4 سے بڑھا کر 12 کرنے میں کوئی مضائقہ نہیں ہے ۔ سدھیر کمیشن رپورٹ نے واضح کیا کہ مسلمانوں کو بینک سے لونس ، ملازمتیں اور اسکیمات کے فوائد منصفانہ طور پر حاصل نہیں ہوتے ۔ سدھیر کمیٹی کی رپورٹ سے ہم اتفاق رکھتے ہیں اور بی سی کمیشن سے مطالبہ کرتے ہیں کہ وہ مسلم تحفظات کو 4 فیصد سے بڑھاکر 12 فیصد کرنے کی سفارش کرے ۔ انہوں نے بی سی کمیشن سے خواہش کی کہ وہ اضلاع کا دورہ کرے اور حقائق کا خود مشاہدہ کرتے ہوئے ایسی مضبوط و جامع رپورٹ پیش کرے جس کو عدالتوں میں بھی چیلنج نہیں کیا جاسکے ۔ بی سی کمیشن مسلمانوں کے محروم طبقات کے ساتھ انصاف کرے ۔ پروفیسر محمد انصاری عثمانیہ یونیورسٹی ، محمد یونس صدر مسلم اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن تلنگانہ کے علاوہ عثمانیہ یونیورسٹی کے طلباء اور ملازمین نے بھی آج نمائندگی کی اور بی سی کمیشن سے 12 فیصد تحفظات کی فراہمی کا مطالبہ کیا ۔ سید کلیم پٹیل ٹی آر ایس رکن بلدیہ سدا سیو پیٹ نے بھی نمائندگی کی ۔۔

حیدرآباد ۔ 17 ۔ دسمبر : ( سیاس

TOPPOPULARRECENT