Wednesday , October 18 2017
Home / ہندوستان / تحفظات کے کارآمد ہونے پر کانگریس کے منیش تیواری کا بھی اعتراض

تحفظات کے کارآمد ہونے پر کانگریس کے منیش تیواری کا بھی اعتراض

نئی دہلی ۔ 21 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) سابق وزیراطلاعات و نشریات منیش تیواری نے بھی آج 21 ویں صدی میں تحفظات کے کارآمد ہونے پر اعتراض کیا اور کہا کہ امکان ہیکہ اس کی تمام افراد کو ضرورت ہو، اس لئے تحفظات کی بنیاد ذات نہیں بلکہ معاشی حالت ہونی چاہئے۔ امکان ہیکہ کانگریس قائد کے اس تبصرہ پر کانگریس پارٹی برہم ہوجائے۔ ایک دن قبل آر ایس ایس کے سرسنچالک موہن بھاگوت نے آر ایس ایس کے ترجمان آرگنائزر اور پنچ جنیہ کو انٹرویو دیتے ہوئے تحفظات پالیسی پر نظرثانی کی اپیل کی تھی۔ انہوں نے ادعا کیا تھا کہ تحفظات کو سیاسی مقاصد کیلئے استعمال کیا جارہا ہے۔ انہوں نے تجویز پیش کی تھی کہ ایک غیرسیاسی کمیٹی تشکیل دی جائے جو ایسے فوائد کی ضرورت پر غور کرے اور اس بات کا تعین کرے کہ کتنی مدت تک ایسے فوائد جاری رکھے جاسکتے ہیں۔ منیش تیواری نے پرزور انداز میں کہا کہ ان کا نظریہ یہ ہیکہ تحفظات طویل مدت تک جاری رکھے جائیں۔ انہوں نے اس بارے میں 15 دن قبل اپنے تحریر کردہ ایک مضمون کا بھی حوالہ دیا اور کہاکہ موہن بھاگوت نے جو کچھ کہاہے اس کا لحاظ کئے بغیر اب وقت آ گیا ہیکہ تحفظات کے 21 ویں صدی میں کارآمد ہونے پر غور کیا جائے اور اگر اس پس منظر میں یہ کارآمد ہی ہیں تو ان کی بنیاد معاشی جیسے غربت ہونی چاہئے جو پسماندگی کی سب سے بڑی وجہ ہے۔ تیواری ریاست پنجاب سے تعلق رکھتے ہیں اور سابق یو پی اے حکومت میں وزیراطلاعات و نشریات رہنے کے علاوہ پارٹی کے ترجمان بھی تھے۔

TOPPOPULARRECENT