Thursday , August 17 2017
Home / شہر کی خبریں / تعلیمی شعبہ کو اسکل ڈیولپمنٹ سے مربوط کرنے کی ضرورت پر زور

تعلیمی شعبہ کو اسکل ڈیولپمنٹ سے مربوط کرنے کی ضرورت پر زور

تلنگانہ جاگرتی کے زیر اہتمام اسکل ڈیولپمنٹ سنٹر کا افتتاح ‘ مرکزی وزیر راجیو پرتاپ روڈی کا خطاب
حیدرآباد۔/2ستمبر، (سیاست نیوز) تلنگانہ جاگرتی نے بیروزگار نوجوانوں کو فنی کورسیس میں تعلیم کے ذریعہ روز گار سے وابستہ کرنے کیلئے اِسکل ڈیولپمنٹ سنٹر قائم کیا ہے۔ اس سنٹر کے تحت پہلے مرحلہ میں ایک لاکھ بیروزگار نوجوانوں کو ٹریننگ کے بعد روزگار کے مواقع فراہم کرنے کا نشانہ مقرر کیا گیا۔ حیدرآباد کے اشوک نگر میں اِسکل ڈیولپمنٹ سنٹر کا آج مرکزی وزیر راجیو پرتاپ روڈی اور تلنگانہ جاگرتی کی صدر کے کویتا ایم پی نے افتتاح کیا۔ مرکزی وزیر نے تلنگانہ جاگرتی کی فنی کورسیس میں تربیت سے متعلق سرگرمیوں پر مشتمل تصویری نمائش کا مشاہدہ کیا۔ بعد میں اے وی کالج میں منعقدہ تقریب میں مرکزی وزیر کے علاوہ ریاستی گورنر ای ایس ایل نرسمہن اور مرکزی وزیر لیبر بنڈارودتاتریہ، ارکان پارلیمنٹ جتیندر ریڈی، اسد اویسی، ارکان اسمبلی ڈاکٹر کے لکشمن، کشن ریڈی کے علاوہ دیگر قائدین نے شرکت کی۔ گورنر ای ایس ایل نرسمہن نے تلنگانہ جاگرتی کے بروچر کی رسم اجراء انجام دی۔ گورنر نرسمہن نے اِسکل ڈیولپمنٹ سنٹر کے قیام کو تلنگانہ جاگرتی کا کارنامہ قرار دیا اور اس سلسلہ میں جاگرتی کی صدر کویتا کو مبارکباد پیش کی۔ مرکزی وزیر راجیو پرتاپ روڈی نے بیروزگار نوجوانوں کیلئے تلنگانہ جاگرتی کی خدمات کی ستائش کی۔ گورنر نے کہا کہ ایسے سنٹر کے قیام سے بیروزگار نوجوانوں کو نہ صرف روزگار کے حصول میں مدد ملے گی بلکہ تلنگانہ ریاست ترقی کی راہ پر گامزن ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ بیروزگاری کے مسئلہ سے نمٹنے اس طرح کے اِسکل ڈیولپمنٹ سنٹرس اہم رول ادا کرسکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ انجینئرنگ کی تکمیل کے باوجود نوجوانوں کی روزگار سے محرومی افسوسناک ہے۔ انہوں نے اس بات پر افسوس کا اظہار کیا کہ ملک میں تعلیم نے تجارت کا رنگ اختیار کرلیا ہے۔ انہوں نے اس شعبہ میں تبدیلیوں و اصلاحات پر زور دیا اور کہا کہ تعلیمی شعبہ کو اِسکل ڈیولپمنٹ سے مربوط کرنے کی ضرورت ہے۔ گورنر نے کہا کہ اِسکل ڈیولپمنٹ کے بغیر میک اِن انڈیا کو حقیقت میں تبدیل کرنا مشکل ہے۔ انہوں نے تلنگانہ جاگرتی کو مشورہ دیا کہ وہ سماج میں شعور بیداری کا کام انجام دیں۔ مرکزی وزیر راجیو پرتاپ روڈی نے کویتا کو اس منفرد سنٹر کے قیام پر مبارکباد پیش کی۔ انہوں نے کہا کہ تلنگانہ جاگرتی کا یہ اقدام  ملک کی دیگر ریاستوں کیلئے مثالی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اِسکل انڈیا مشن کا آغاز وزیر اعظم نریندر مودی نے کیا تھا اور اس طرح کے اداروں کے قیام سے نوجوانوں کو روزگار سے مربوط کرنے میں مدد ملے گی۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں پہلی مرتبہ مرکزی حکومت نے اِسکل ڈیولپمنٹ پر توجہ مرکوز کی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ وزیر اعظم کشل وکاس یوجنا کے تحت 12000 کروڑ روپئے خرچ کئے جارہے ہیں۔ آنے والے دو برسوں میں مزید 32000 کروڑ روپئے خرچ کئے جائیں گے۔ مرکزی حکومت ملک بھر میں 25000 فنی تربیت کے مراکز قائم کرنے کا منصوبہ رکھتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ بی ٹیک کے ایسے طلباء جو فنی تربیت سے محروم ہیں انہیں 5000روپئے کی تنخواہ بھی حاصل نہیں ہورہی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ سماج میں ایک ویلڈر مختلف طرح کے کام انجام دیتا ہے اور وہ اعلیٰ عہدیداروں سے زیادہ آمدنی حاصل کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔ انہوں نے تلنگانہ جاگرتی کے اس پروگرام میں مرکز سے ہر ممکن تعاون کا یقین دلایا اور کہا کہ اس طرح کے پروگراموں کو مزید توسیع دینے کی ضرورت ہے۔ مرکزی وزیر بنڈارو دتاتریہ نے اِسکل ڈیولپمنٹ سنٹر کے قیام پر تلنگانہ جاگرتی صدر کو مبارکباد پیش کی اور کہا کہ موجودہ زمانہ میں اِسکل ڈیولپمنٹ کی غیر معمولی اہمیت ہے۔ جاگرتی کی صدر کویتا نے کہا کہ ان کی تنظیم نے بڑھتی بیروزگاری کو پیش نظر رکھتے ہوئے اس مرکز کے قیام کا فیصلہ کیا ہے۔ ریاست کے دیگر حصوں میں بھی اس طرح کے مراکز کا قیام عمل میں آئے گا۔ رکن پارلیمنٹ جتیندر ریڈی اور دوسروں نے تقریب سے خطاب کیا۔

TOPPOPULARRECENT