Thursday , August 17 2017
Home / شہر کی خبریں / تعلیم کے ذریعہ ہی خواتین کی با اختیار ی ممکن: سومیا مشرا

تعلیم کے ذریعہ ہی خواتین کی با اختیار ی ممکن: سومیا مشرا

اردو یونیورسٹی میں بین الاقوامی یوم خواتین کے موقع پر خود حفاظتی تربیتی پروگرام
حیدرآباد ۔ 8 ۔ مارچ : ( پریس نوٹ ) : بین الاقوامی سطح پر خواتین آج اہم کام انجام دے رہی ہیں۔ وہ اعلیٰ عہدوں پر فائز ہیں اور انہیں فیصلہ ساز کی حیثیت حاصل ہے۔ تعلیم کے ذریعہ ہی یہ ممکن ہوسکا ہے۔ تعلیم ہی سے خود کفالت آئے گی اور اختیارات حاصل ہوں گے۔ ان خیالات کا اظہار آج یہاں اردو یونیورسٹی میں بین الاقوامی یوم خواتین کے موقع پر ’’خود حفاظتی تربیتی پروگرام برائے خواتین‘‘ کے عنوان سے منعقدہ پروگرام میں مہمانِ خصوصی ڈاکٹر سومیا مشرا آئی پی ایس، انسپکٹر جنرل، سی آئی ڈی، تلنگانہ نے کیا۔ یہ پروگرام مرکز برائے مطالعاتِ نسواں، مانو اور ہیپکیڈو فیڈریشن انڈیا (Hapkido Federation India) کے اشتراک سے منعقد کیا گیا تھا۔ڈاکٹر سومیا مشرا نے کہا کہ یونیورسٹی کی فضا کو دیکھ کر ان کی امیدیں بہت بڑھ گئی ہیں۔ انہوں نے طلبہ سے کہا کہ وہ یہاں پر دستیاب کسی بھی تعلیمی موقع کو نہ گنوائیں اور اس سے بھرپور استفادہ کریں۔ انہوں نے کہا کہ تعلیم و تربیت ایک دن کا معاملہ نہیں ہے بلکہ ہمیشہ جاری رہنے والا عمل ہے۔ اپنی مہارت کو ہمیشہ بڑھانا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ خواتین کو اپنی خود اعتمادی کی سطح کو مضبوط کرنا ہے۔ اس سے ان کی مجبوری کی صورت حال ختم ہوگی۔انہوں نے ہیپکیڈو جو کہ مارشیل آرٹ کی ایک قسم ہے، کے تناظر میں اسپورٹس کی اہمیت و افادیت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ یہ جسمانی اور دماغی مضبوطی کے لیے بہت ضروری ہے۔ انہوں نے طلباء و طالبات سے کہا کہ انہیں اپنا نصب العین طے کرتے ہوئے اپنے ہدف پر قائم رہنا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ تعلیم کے ذریعہ پہلے وہ اپنے آپ کو آگے بڑھائیں۔ ایک مقام حاصل کریں اور پھر دوسروں کی مدد کریں۔ ڈاکٹر سومیا نے کہا کہ خواتین کو منفی اسٹیریو ٹائپ کی ذہنیت سے نکلنا ہوگا، تبھی وہ مختلف میدانوں میں کامیابی حاصل کرسکتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اگرچہ مرد و خواتین برابر کا درجہ رکھتے ہیں لیکن ہمیں مزید مساوی سماج کی تشکیل میں آگے آنا چاہئے۔حیدرآباد کی بین الاقوامی شہرت یافتہ کراٹے چیمپئن سیدہ فلک پروگرام کی مہمانِ اعزازی تھیں۔ ۔

TOPPOPULARRECENT