Saturday , August 19 2017
Home / اضلاع کی خبریں / تقویۃ الایمان کیلئے اللہ سے محبت، خوف و توکل ضروری

تقویۃ الایمان کیلئے اللہ سے محبت، خوف و توکل ضروری

جماعت اسلامی گلبرگہ کا اجتماع ،محمد مظہر الدین، ذولفقار علی ،علاء الدین محمد کا خطاب
کلبرگی ۔25 اگست(سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) تمام انسانوں کو اللہ نے بندگی کیلئے پیدا کیا ہے اس لئے بندے پر لازم ہے کہ وہ اللہ کی بندگی اختیار کرے ۔ جو کوئی اس سے رو گردانی کرتا ہے وہ بڑا خطاکار ہوگا۔ بندگی رب کیلئے ایمان ضروری ہے۔ ان خیالات کا اظہار ہدایت سنٹر میں جماعت اسلامی ہند گلبرگہ کے اجتماع عام سے ’’ تقویۃ الایمان ‘‘ کے عنوان پر خطاب کرتے ہوئے محمد مظہر الدین نے کیا ۔ آپ نے کہا کہ ہر مسلمان کیلئے یہ ضروری ہے کہ اپنے ایمان کو درست کرے اور عقیدہ کی اصلاح کرے۔ اس کیلئے قرآن وسنت کی طرف رجوع کرنا ہوگا۔ آپ نے کہا کہ جب کسی بندے میں ایمان آجاتا ہے تو وہ گناہوں سے اپنے آپ کو بچاتا رہتا ہے اور حق کی خاطر آواز اٹھانے اور جد وجہد کرنے پر آمادہ ہوسکتا ہے چاہے یہ جد وجہد اس کے اپنے عزیزوں کیخلاف ہی کیوں نہ کرنا پڑے۔ انہوں نے کہا کہ ایمان کو تقویت پہنچانے کیلئے ضروری ہے کہ ایک بندہ میں اللہ سے محبت ہو، اس کا خوف ہو، اللہ اور اس کے رسول ؐکی بغیر چوں و چرا اطاعت کا جذبہ ہو، قرآن کی تلاوت ، تدبر ،غور و فکر کے ذریعہ اس سے رہنمائی حاصل کرتا رہے، ہر حال میں اللہ پر توکل کرتا رہے اور امر بالمعروف و نہی ان لمنکر کے فریضہ کو انجام دیتا رہے۔ اجتماع کا آغاز ذولفقار علی کے درس قرآن سے ہوا۔ سورۃ التوبہ کی آیات 75-80 کی روشنی میں کنڑا زبان میں درس دیتے ہوئے منافقت کی نشانیوں کا تذکرہ کیا۔ آپ نے کہا کہ مدینہ ہجرت کرکے آنے کے بعد منافقت کا ظہور ہوا۔ آیات کی روشنی میں ان کی صفات کا تذکرہ کرتے ہوئے کہا کہ منافق اپنے مال خرچ کرنے میں بخل کرتے ہیں، اسلامی اجتماعیت کے رازوں کو فاش کرتے ہیں اور اللہ کی راہ میں خرچ کرنے والوں کا مذاق اڑاتے ہیں۔ نبی کریم ؐکے دور کے واقعات کی روشنی میں آپ نے ان آیات کی تشریح کی۔ ’’صلہ رحمی اور اخوت‘‘ عنوان پر علاء الدین محمد درس حدیث اور عبدالقدوس نے حالات حاضرہ پر تبصرہ کیا ۔

TOPPOPULARRECENT