Friday , September 22 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ اردو اکیڈیمی کی کل بیسٹ اردو ٹیچر و بیسٹ اردو اسٹوڈنٹ ایوارڈ تقریب

تلنگانہ اردو اکیڈیمی کی کل بیسٹ اردو ٹیچر و بیسٹ اردو اسٹوڈنٹ ایوارڈ تقریب

اندرا پریہ درشنی نامپلی میں مقرر ، ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی کی شرکت : ایس اے شکور
حیدرآباد ۔ 14۔  نومبر  (سیاست نیوز) تلنگانہ اردو اکیڈیمی 16 نومبر کو اندرا پریہ درشنی ہال نامپلی میں بیسٹ اردو ٹیچر اور بیسٹ اردو اسٹوڈنٹس ایوارڈس پیش کرے گی۔ مولانا ابوالکلام آزاد کے یوم پیدائش کے موقع پر یوم اقلیتی بہبود و یوم قومی تعلیم کے ضمن میں یہ ایوارڈس پیش کئے جارہے ہیں۔ سکریٹری ڈائرکٹر اردو اکیڈیمی پروفیسر ایس اے شکور نے بتایا کہ ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی 6 بجے شام 50 بیسٹ اردو ٹیچرس ایوارڈ پیش کریں گے ۔ اس کے علاوہ شہر سے تعلق رکھنے والے 10 اردو میڈیم طلبہ کو بیسٹ اردو اسٹوڈنٹ ایوارڈ پیش کیا جائے گا۔ اکیڈیمی کی جانب سے ہر سال 50 اساتذہ اور 50 طلبہ کو ایوارڈ کے لئے منتخب کیا جاتا ہے ۔ اساتذہ حیدرآباد میں اپنا ایوارڈ حاصل کریںگے جبکہ حیدرآباد کے ماسوا دیگر اضلاع سے تعلق رکھنے والے طلبہ اپنے متعلقہ اضلاع میں ڈی ای او کے ذریعہ یہ ایوارڈ حاصل کریں گے۔ پرائمری سے ڈگری کالج تک کے اساتذہ کا انتخاب کیا گیا ہے جبکہ ایس ایس سی اردو میڈیم میں ٹاپ کرنے والے ہر ضلع سے پانچ طلبہ کا انتخاب کیا گیا۔ جس کی تفصیلات متعلقہ ڈسٹرکٹ ایجوکیشنل آفیسر سے حاصل کی گئیں۔ اساتذہ کو ایوارڈ کے تحت 10,000 روپئے ، سرٹیفکٹ ، مومنٹو اور شال پیش کی جائے گی جبکہ طلبہ کو 3,000 روپئے اور سرٹیفکٹ دیا جائے گا۔ پروفیسر ایس اے شکور نے بتایا کہ بعض اضلاع میں درخواستیں داخل نہیں کی گئیں ، لہذا حیدرآباد میں زائد ایوارڈس دینے کا فیصلہ کیا گیا ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی کے علاوہ ریاستی وزراء ، ارکان پارلیمنٹ،  اسمبلی و کونسل تقریب میں شرکت کریں گے۔ ایوارڈس کی پیشکشی کے بعد محفل قوالی کا اہتمام کیا جارہا ہے جس میں ناگپور کے مشہور قوال چھوٹے جانی بابو اپنے فن کا مظاہرہ کریں گے۔ مقامی قوالوں میں وارثی برادرس اور عتیق بندہ نوازی قوالوں کو مدعو کیا گیا ہے۔ جاریہ سال 11 نومبر کو یوم اقلیتی بہبود کی تقریب اقلیتی اقامتی اسکولس سوسائٹی کی تقریب میں یہ ایوارڈ پیش نہیں کئے جاسکے۔ اردو اکیڈیمی نے اس کے لئے علحدہ تقریب کا فیصلہ کیا۔ سکریٹری اقلیتی بہبود سید عمر جلیل نے ایوارڈ تقریب کے انتظامات کا جائزہ لیا۔

TOPPOPULARRECENT