Thursday , September 21 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ حج کوٹہ میں اضافہ کی مساعی ممبئی میں آج سنٹرل حج کمیٹی کا اجلاس ، پروفیسر ایس اے شکور کی شرکت

تلنگانہ حج کوٹہ میں اضافہ کی مساعی ممبئی میں آج سنٹرل حج کمیٹی کا اجلاس ، پروفیسر ایس اے شکور کی شرکت

حیدرآباد۔ 18 ۔ نومبر (سیاست نیوز) وزارت خارجہ اور سنٹرل حج کمیٹی نے ملک کی تمام حج کمیٹیوں کے صدور نشین اور اگزیکیٹیو آفیسرس کا ممبئی میں اجلاس طلب کیا ہے تاکہ حج 2015 ء کے انتظامات میں پیش آئی دشواریوں کا جائزہ لیا جاسکے۔ یہ اجلاس کل 19 نومبر کو ممبئی میں منعقد ہوگا جس میں تلنگانہ اور آندھراپردیش کی نمائندگی پروفیسر ایس اے شکور اسپیشل آفیسر حج کمیٹی کریں گے ۔ چونکہ آندھراپردیش حکومت نے ابھی تک حج کمیٹی کے لئے علحدہ اسپیشل آفیسر کا تقرر نہیںکیا ہے ۔ لہذا پروفیسر ایس اے شکور سے خواہش کی گئی کہ وہ آندھراپردیش کی بھی نمائندگی کریں۔ جاریہ سال تلنگانہ حج کمیٹی نے آندھراپردیش کے حجاج کرام کی روانگی اور واپسی کے انتظامات کئے تھے۔ وجئے واڑہ میں آندھراپردیش کے دارالحکومت کی تعمیر کا کام ابھی جاری ہے ، لہذا آئندہ سال بھی آندھراپردیش کے حجاج کرام حیدرآباد سے ہی روانہ ہوں گے۔ وزارت خارجہ اور سنٹرل حج کمیٹی کے عہدیدار جاریہ سال مختلف ریاستوں سے حجاج کرام کی روانگی اور واپسی کے موقع پر پیش آئے مسائل سے واقفیت حاصل کریں گے اور حج 2016 کے انتظامات کو قطعیت دی جائے گی جس میں جاریہ سال کے تجربات کو پیش نظر رکھا جائے گا۔پروفیسر ایس اے شکور اجلاس میں دونوں ریاستوں کو درپیش مسائل پر نمائندگی کریںگے۔ وہ دونوں ریاستوں میں مسلم آبادی کے لحاظ سے حج کوٹہ الاٹ کرنے کی نمائندگی کریں گے کیونکہ جاریہ سال تلنگانہ میں زائد مسلم آبادی کے باوجود کم کوٹہ الاٹ کیا گیا تھا۔ محفوظ زمرہ جات کے باعث بہت کم حجاج کرام کیلئے قرعہ اندازی کی جاسکی اور حیدرآباد کے کثیر تعداد میں حج کے درخواست گزار سلیکشن سے محروم رہے ۔ تلنگانہ حکومت نے بھی حج کوٹہ میں اضافہ کیلئے مرکز سے نمائندگی کی ہے ۔

 

پروفیسر ایس اے شکور نے بتایا کہ آئندہ سال حجاج کرام کے میڈیکل ٹسٹ کے طریقہ کار میں تبدیلی کیلئے نمائندگی کریں گے۔ جاریہ سال 18,000 درخواست فارمس داخل کئے گئے تھے اور قرعہ اندازی سے قبل تمام درخواست گزاروں کا میڈیکل ٹسٹ لازمی قرار دیا گیا ۔ اجلاس میں تجویز پیش کی جائے گی کہ قرعہ اندازی یا محفوظ کوٹہ میں منتخب ہونے والے عازمین کو ہی میڈیکل ٹسٹ لازمی قرار دیا جائے اور یہ ٹسٹ ٹیکہ اندازی کے وقت کیا جاسکتا ہے۔ اس طرح ان ہزاروں افراد کیلئے میڈیکل ٹسٹ کے بوجھ کو کم کیا جاسکتا ہے جو منتخب نہیں ہوپاتے۔ سنٹرل حج کمیٹی سے نمائندگی کی جائے گی کہ منتخب عازمین حج کی فہرست کی اجرائی کے بعد ٹیکہ اندازی کے وقت میڈیکل ٹسٹ کو منعقد کیا جائے۔ انہوں نے بتایا کہ جاریہ سال کی طرح 7 دن میں 21 پروازوں کے شیڈول کی تیاری سے حج کمیٹی اور عازمین حج کو کافی دشواریوں کا سامنا کرنا پڑا۔ لہذا حج کمیٹی سے خواہش کی جائے گی کہ روزانہ زیادہ سے زیادہ صرف دو پروازوں کا اہتمام کیا جائے تاکہ ریاستی حج کمیٹی کو دشواریوں سے بچایا جاسکے۔ گزشتہ سال حج پروازوں کیلئے 16 دن کا شیڈول لیا گیا تھا جبکہ جاریہ سال صرف ایک ہفتہ میں تمام حجاج کرام کی روانگی اور اسی طرح واپسی کا انتظام کیا گیا۔ تلنگانہ حج کمیٹی عازمین حج کو فراہم کئے جانے والے سوٹ کیس کے بارے میں نمائندگی کریں گی۔ سوٹ کیس کے غیر معیاری ہونے کے سبب حجاج کو کئی دشواریوں کا سامنا کرنا پڑا۔ لہذا سنٹرل حج کمیٹی کی جانب سے فراہم کئے جانے والے سوٹ کیس کو لازمی قرار دیئے جانے کے بجائے اسے اختیاری بنانے کی اپیل کی جائے گی۔ اجلاس میں وزارت خارجہ اور سنٹرل حج کمیٹی کے عہدیدار شرکت کریں گے۔

TOPPOPULARRECENT