Wednesday , August 16 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ حکومت کا بجٹ مایوس کن ، اعداد و شمار کا کھیل

تلنگانہ حکومت کا بجٹ مایوس کن ، اعداد و شمار کا کھیل

اقلیتیں اور دیگر کمزور طبقات میں مایوس ، محمد علی شبیر اور دیگر کا ردعمل
حیدرآباد۔ 14۔ مارچ (سیاست نیوز) کانگریس پارٹی نے تلنگانہ حکومت کے بجٹ کو مایوس کن اور اعداد و شمار کا کھیل قرار دیا۔ پارٹی نے کہا کہ ٹی آر ایس حکومت نے اقلیتوں اور دیگر کمزور طبقات کو مایوس کیا ہے۔ قانون ساز کونسل میں قائد اپوزیشن محمد علی شبیر اور ارکان محمد فاروق حسین ، دامودر ریڈی اور شریمتی اے للیتا نے میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ ٹی آر ایس نے عوام سے جو وعدے کئے تھے، ان کی تکمیل کیلئے بجٹ میں رقومات منظور نہیں کی گئی ہیں۔ محمد علی شبیر نے بجٹ کو اقلیتوں کیلئے مایوس کن قرار دیا اور کہا کہ گزشتہ سال کے مقابلہ صرف 74 کروڑ روپئے کا اضافہ کیا گیا جو محض اقلیتوں کو خوش کرنے کی کوشش ہے۔ انہوں نے کہا کہ بجٹ میں اضافہ سے زیادہ اہمیت اس بات کی ہے کہ بجٹ کتنا خرچ کیا گیا۔ گزشتہ سال اقلیتی بہبود کا بجٹ 1130 کروڑ تھا لیکن سال کے اختتام تک صرف 40 فیصد بجٹ جاری کیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ ایسے اضافہ سے کیا فائدہ جب بجٹ خرچ کرنے میں حکومت کو دلچسپی نہ ہو۔ انہوں نے کہا کہ مکمل بجٹ خرچ کے ذریعہ حکومت کو اقلیتی بہبود میں اپنی سنجیدگی ثابت کرنی چاہئے۔ جون سے اقلیتوں کیلئے 70 اقامتی اسکولس کے قیام کا خیرمقدم کرتے ہوئے محمد علی شبیر نے کہا کہ حکومت کو اسکولس کے آغاز کو یقینی بنانا چاہئے۔ حکومت کا بجٹ صرف سننے اور پڑھنے کیلئے تو اچھا ہے لیکن حقیقت سے برعکس ہے۔ قائد اپوزیشن نے الزام عائد کیا کہ ٹی آر ایس حکومت صرف وعدوں کے ذریعہ اقلیتوں کو بہلانے کی کوشش کر رہی ہے۔ ایس سی ، ایس ٹی طبقات کو بھی بجٹ میں مایوسی ہوئی ہے۔ حکومت پسماندہ طبقات اور اقلیتوں کیلئے علحدہ سب پلان کے اعلان میں ناکام ہوچکی ہے۔ انہوں نے کہا کہ گزشتہ سال ریاست کا بجٹ ایک لاکھ 15 ہزار کروڑ تھا جبکہ جاریہ سال ایک لاکھ 30 ہزار کروڑ کا بجٹ پیش کیا گیا۔ گزشتہ سال 50 فیصد بھی مجموعی بجٹ حکومت نے خرچ نہیں کیا ۔ اس طرح ٹی آر ایس حکومت صرف اعداد و شمار کے ذریعہ عوام کو خوش کرنا چاہتی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ ہاؤزنگ اسکیم میں صرف 39 فیصد بجٹ خرچ کیا گیا۔ حکومت کو فلاحی اور ترقیاتی اسکیمات سے زیادہ سکریٹریٹ کی تعمیر ، کیمپ آفس اور اسمبلی عمارتوں کی تعمیر سے دلچسپی ہے۔ اسے تو غریبوں کی امکنہ اسکیم سے دلچسپی ہونی چاہئے تھی۔ محمد علی شبیر نے کہا کہ بجٹ پر مباحث کے دوران کانگریس پارٹی حکومت کی خامیوں کو بے نقاب کرے گی۔

TOPPOPULARRECENT