Thursday , August 17 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ ریاست کو مستقل طور پر خشک سالی سے نجات دلانے کی منصوبہ بندی

تلنگانہ ریاست کو مستقل طور پر خشک سالی سے نجات دلانے کی منصوبہ بندی

زیر التواء آبپاشی پراجکٹس کی تکمیل کو یقینی بنایا جائے گا ، وزیر آبپاشی ٹی ہریش راؤ کا بیان
حیدرآباد۔/11ستمبر، ( سیاست نیوز) وزیر آبپاشی ہریش راؤ نے کہا کہ ٹی آر ایس حکومت ریاست میں تمام زیر التواء آبپاشی پراجکٹس کی تکمیل کو یقینی بنائے گی۔ پراجکٹس کی تکمیل کیلئے بجٹ کی کوئی کمی نہیں اور حکومت بجٹ کی فراہمی اور اس کے خرچ سے اچھی طرح واقف ہے۔ میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے ہریش راؤ نے کہا کہ تلنگانہ ریاست کو مستقل طور پر خشک سالی سے نجات دینے اور سرسبز و شاداب ریاست میں تبدیل کرنے کیلئے حکومت نے آبپاشی پراجکٹس کی تکمیل کا بیڑہ اٹھایا ہے۔ انہوں نے الزام عائد کیا کہ سابق حکومتوں نے تلنگانہ میں آبپاشی پراجکٹ کی تکمیل پر توجہ نہیں کی جس کے نتیجہ میں تلنگانہ کے کئی علاقے پسماندگی اورخشک سالی کا شکار ہوگئے۔ انہوں نے کہا کہ آندھرائی حکمرانوں نے اپنے علاقوں میں اجازت کے بغیر کئی غیرقانونی آبپاشی پراجکٹس تعمیر کئے اور اس کیلئے تلنگانہ کے بجٹ کا استعمال کیا گیا۔ پراجکٹس کی تعمیر پر اعتراض کرنے والے اپوزیشن قائدین کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے ہریش راؤ نے کہا کہ کانگریس اور تلگودیشم کے تلنگانہ قائدین اس وقت خاموش تھے جب ان کی حکومتیں تلنگانہ کے ساتھ ناانصافی کررہی تھیں۔ انہوں کہاکہ حکومت مختلف پراجکٹس کے ڈیزائن میں تبدیلی کے ذریعہ زیادہ سے زیادہ علاقوں کو سیراب کرنے کا منصوبہ رکھتی ہے۔ انہوں نے پراجکٹس کے ڈیزائن میں تبدیلی کو کرپشن سے جوڑنے اپوزیشن کی کوششوں کو مضحکہ خیز قرار دیا اور کہا کہ پراجکٹس کے کاموں کی منظوری اور ان کی تکمیل میں مکمل شفافیت ہے اور کسی بے قاعدگی کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا۔ ہریش راؤ نے کہا کہ دراصل اپوزیشن جماعتیں ریاست کی ترقی میں رکاوٹ پیدا کرنے کی کوشش کررہی ہیں تاکہ انہیں سیاسی فائدہ حاصل ہو۔ انہوں نے کہا کہ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ سنہرے تلنگانہ کی تشکیل کے مقصد سے آگے بڑھ رہے ہیں اور آبپاشی پراجکٹس کی تکمیل سے اس مقصد کی تکمیل میں مدد ملے گی۔ انہوں نے پرانہیتا چیوڑلہ پراجکٹ کے بارے میں اپوزیشن کی جانب سے پھیلائی جانے والی اطلاعات کو مسترد کردیا اور کہا کہ حکومت صرف اس پراجکٹ کے ڈیزائن میں تبدیلی کررہی ہے تاکہ مزید علاقوں کو زرعی اغراض کیلئے پانی سیراب کیا جاسکے۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس حکومت نے پرانہیتا چیوڑلہ پراجکٹ کی منظوری تک حاصل نہیں کی تھی اور آج اس پارٹی کے قائدین حکومت پر تنقیدیں کررہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ زرعی شعبہ کی ابتر صورتحال کیلئے تلگودیشم اور کانگریس ذمہ دار ہیں جن کے دور حکومت میں تلنگانہ کو فراموش کردیا گیا۔ ہریش راؤ نے الزام عائد کیا کہ اپوزیشن کسانوں کی خودکشی کے واقعات کو سیاسی رنگ دینے کی کوشش کررہی ہے۔ انہوں نے کہاکہ کسانوں کی اموات کو خودکشی کے طور پر پیش کرتے ہوئے سیاسی فائدہ حاصل کرنے کی کوشش کی جارہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ریاست کے کسان حکومت کی اسکیمات سے مطمئن ہیں اور وہ اپوزیشن کے بہکاوے میں آنے والے نہیں۔

TOPPOPULARRECENT