Monday , July 24 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ شعبہ طب نظرانداز، سرکاری ہاسپٹلس کی صورتحال ابتر، پرائمری ہیلت سنٹرس کی کارکردگی بہتر بنانے کا مطالبہ، کانگریس ایم ایل سی پی سدھاکر ریڈی

تلنگانہ شعبہ طب نظرانداز، سرکاری ہاسپٹلس کی صورتحال ابتر، پرائمری ہیلت سنٹرس کی کارکردگی بہتر بنانے کا مطالبہ، کانگریس ایم ایل سی پی سدھاکر ریڈی

حیدرآباد 12 فروری (سیاست نیوز) سینئر کانگریس قائد و رکن قانون ساز کونسل مسٹر پی سدھاکر ریڈی نے حکومت تلنگانہ پر طبی شعبہ کو نظرانداز کرنے کا الزام عائد کیا جس کی وجہ سے آج ریاست کے مختلف سرکاری ہاسپٹلس بشمول نیلوفر ہاسپٹل کی صورتحال انتہائی ابتر ہوچکی ہے۔ علاوہ ازیں ریاست میں منڈل سطح پر پائے جانے والے پرائمری ہیلت سنٹرس کی کارکردگی کو بہتر بنانے سے حکومت کی عدم توجہ کے نتیجہ میں پرائمری ہیلت سنٹرس سے عوام رجوع ہونے سے گریز کررہے ہیں۔ انھوں نے پرائمری ہیلت سنٹرس کی کارکردگی کو فعال بنانے کے لئے مؤثر اقدامات کرنے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہاکہ پرائمری ہیلت سنٹرس میں طبی سہولتوں کی فراہمی کو یقینی بنانے کے اقدامات کریں۔ مسٹر سدھاکر ریڈی نے نیلوفر ہاسپٹل میں پانچ حاملہ خواتین کی اموات کے واقعہ کا تذکرہ کرتے ہوئے کہاکہ اس واقعہ کے ذمہ داروں کے خلاف سخت کارروائی کرنے اور اخلاقی ذمہ داری قبول کرتے ہوئے وزیر صحت و طبابت مسٹر لکشما ریڈی سے فی الفور مستعفی ہونے کا مطالبہ کیا۔ نیلوفر ہاسپٹل میں اتنا بڑا واقعہ پیش آنے کے باوجود چیف منسٹر کے چندرشیکھر راؤ کم از کم واقعہ پر جائزہ نہ لینا اور لب کشائی سے گریز کرنا انتہائی شرمناک بات ہے۔ قائد کانگریس پارٹی سدھاکر ریڈی نے محکمہ صحت و طبابت کی جانب سے طبی آلات کی خریدی میں بڑے پیمانے پر بے قاعدگیوں کا الزام عائد کیا اور چیف سکریٹری کی صدارت میں کمیٹی تشکیل دے کر مکمل تحقیقات کروانے کا حکومت سے مطالبہ کیا۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT