Tuesday , September 26 2017
Home / اضلاع کی خبریں / تلنگانہ میں آبپاشی کیلئے انقلابی نقشہ کی تیاری

تلنگانہ میں آبپاشی کیلئے انقلابی نقشہ کی تیاری

کریم نگر ۔ 5مارچ ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) مسٹر بی ونود کمار رکن پارلیمنٹ نے پرتیما ہوٹل میں منعقدہ پریس کانفرنس میں کہا کہ ریاست تلنگانہ کے چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ کی دور اندیشی سے کالیشورم لفٹ اریگیشن کی منصوبہ بندی میں چند تبدیلیاں لاکر اس طرح نقشہ تیار کیا گیا ہے جس سے دونوں پڑوسی ریاستوں تلنگانہ اور مہاراشٹرا کو فائدہ ہوگا ۔ انہوں نے متحدہ آندھراپردیش کی سابق کانگریس پارٹی پر یہ الزام لگایا کہ پرانہیتا۔چیوڑلہ پراجکٹ کی تعمیر کے نام سے کروڑوں روپیہ برباد کیا گیا ۔ موصوف نے ریاست تلنگانہ کے قیام کے بعد 17فبروری کو گذشتہ سال ریاست مہاراشٹرا کا دورہ کیا تھا ۔ وہاں چیف منسٹر سے ملاقات کر کے پرانہیتا چیوڑلہ کے تعلق سے بات چیت کی گئی اور واپسی کے بعد محکمہ آبپاشی کے عہدیداروں سے رائے مشورہ کرنے کے بعد گوگل میاپ کے ذریعہ اس طرح کا نقشہ تیار کیا گیا کہ عقل دنگ رہ جاتی ہے ۔ مسٹر ونود کمار نے کہا کہ کالیشورم لفٹ اریگیشن سے مڈ مانیر کے علاوہ دیگر اضلاع میدک ‘ نلگنڈہ ‘ رنگاریڈی اور نظام آباد کی 10لاکھ ایکڑ اراضی سیراب ہوسکتی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ یہ ہماری بدقسمتی ہے کہ کانگریس کے دور حکومت میں راج شیکھر ریڈی چیف منسٹر ہو یا روشیا یا کرن کمار ریڈی پرانہیتا ۔ چیوڑلہ کی کارروائی صرف کاغذی رہی لیکن مسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے اس پراجکٹ میں خصوصی دلچسپی لیکر یہ ثابت کردیا کہ وہ کسانوں کی بھلائی کیلئے فکرمند رہتے ہیں ۔ لفٹ اریگیشن کی تعمیر کے بعد ریاست تلنگانہ میں ایک انقلاب آے کی پیش قیاسی کی جاسکتی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT