Thursday , August 17 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ میں آر ٹی سی بس ٹکٹس اے ٹی ایم طرز پر جاری کرنے کی تجویز

تلنگانہ میں آر ٹی سی بس ٹکٹس اے ٹی ایم طرز پر جاری کرنے کی تجویز

236 کے بشمول 100 ایرکنڈیشن منی بسوں کی خریدی کا فیصلہ ، آندھرا پردیش کے لیے بس خدمات مسدود
حیدرآباد ۔ 22 ۔ اگست : ( سیاست نیوز) : تلنگانہ روڈ ٹرانسپورٹ کارپوریشن ( آر ٹی سی ) مسافرین کو مزید سہولتیں فراہم کرنے کے لیے اے ٹی ایم کے طرز پر بس ٹکٹ جاری کرنے اور بسوں کو جی پی ایس سے مربوط کرنے کی تجویز کے علاوہ 236 منی بسیں بشمول 100 بسیں اے سی خریدنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ تلنگانہ آر ٹی سی نقصانات پر قابو پانے اور آمدنی میں اضافہ کرنے کے لیے مختلف اقدامات کررہی ہے ۔ مسافروں کو زیادہ سے زیادہ سہولتیں فراہم کرنے پر تلنگانہ روڈ ٹرانسپورٹ کی جانب سے خصوصی توجہ دی جارہی ہے ۔ ذرائع کے بموجب تلنگانہ آر ٹی سی کو تکنیکی سہولتوں سے مربوط کرتے ہوئے عوام کے سفر کو آسان بنانے پر غور کیا جارہا ہے ۔ ایک مقام سے دوسرے مقام کو پہونچنے کے لیے مسافرین کو اب قطار میں ٹھہرنے کی ضرورت نہیں رہے گی ۔ آن لائن میں ٹکٹ خریدنے کی سہولت ہونے کے باوجود اے ٹی ایم کے طرز پر (Any Time Ticket) کے مشین سے ٹکٹ جاری کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ پائلٹ پراجکٹ کے طور پر یہ سہولت حیدرآباد اور سکندرآباد کے بڑے بس اسٹانڈس سے شروع کیا جائے گا اور مرحلہ وار اس کو ضلعی و منڈل سطح پر توسیع دینے کی تجویز ہے اس کے علاوہ بسوں کی آمد و رفت پر نظر رکھنے کے لیے آر ٹی سی نے اپنی بسوں کو جی پی ایس نظام سے مربوط کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ تلنگانہ اور آندھرا پردیش روڈ ٹرانسپورٹ ’ کاونٹر سگینچراگریمنٹ ‘ کے تعلق سے ہنوز اتفاق رائے نہیں ہوپایا ہے ۔ جس کی وجہ سے آندھرا پردیش روڈ ٹرانسپورٹ کی 295 بسیں اور تلنگانہ کی 110 بسوں کی پرمیٹ میعاد مکمل ہوگئی ۔ پرمیٹ میں توسیع نہ ہونے کے باعث یہ بسیں دونوں ریاستوں کے بس ڈپوز تک محدود ہو کر رہ گئی ہیں ۔ دونوں ریاستوں کے آر ٹی سی کے درمیان دوبارہ معاہدہ تک ان بسوں کی آمد و رفت کو مسدود کردیا گیا ہے ۔ تلنگانہ آر ٹی سی کا استدلال ہے کہ آندھرا پردیش سے بڑی تعداد میں بسیں تلنگانہ میں چلائی جارہی ہیں ۔ جس سے تلنگانہ آر ٹی سی کو نقصان پہونچ رہا ہے ۔ تلنگانہ آر ٹی سی نے آندھرا پردیش آر ٹی سی سے کوئی ردعمل کا اظہار نہیں کیا ہے ۔ جس پر تلنگانہ آر ٹی سی کی جانب سے آندھرا پردیش کے ڈیمانڈ رہنے والی سڑکوں پر اپنی بسیں چلانے کی حکمت عملی پر غور کررہی ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT