Sunday , August 20 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ میں آندھرائی خانگی بسوں پر کنٹرول کے اقدامات

تلنگانہ میں آندھرائی خانگی بسوں پر کنٹرول کے اقدامات

آر ٹی اے حکام سے تفصیلات اکٹھا کرنے کا تیقن ، وزیر ٹرانسپورٹ کا اسمبلی میں بیان
حیدرآباد۔/22ڈسمبر، ( سیاست نیوز) وزیر ٹرانسپورٹ مہیندر ریڈی نے کہا کہ تلنگانہ میں آندھرائی خانگی بسوں کی اجارہ داری پر کنٹرول کرنے کے اقدامات کئے جائیں گے۔ انہوں نے تلنگانہ کی خانگی بسوں کے خلاف آندھرا میں آر ٹی اے حکام کی کارروائیوں کے بارے میں تفصیلات حاصل کرنے کا تیقن دیا۔ وقفہ سوالات کے دوران ٹی آر ایس رکن سرینواس گوڑ کے سوال پر مہیندر ریڈی نے کہا کہ آندھرا میں تلنگانہ کی بسوں کو جبری چالانات اور سرویسیس روکنے کی شکایات کا جائزہ لیا جارہا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ اگر آندھرائی قائدین کی بسیں تلنگانہ میں ضروری قواعد کی تکمیل کے بغیر چلائی جاتی ہیں تو ان کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔ سرینواس گوڑ نے شکایت کی کہ تلنگانہ ریاست کی تشکیل کے باوجود عہدیداروں کی ملی بھگت سے آج بھی آندھرائی قائدین کا تلنگانہ میں تسلط برقرار ہے۔ ان کی سینکڑوں بسیں تلنگانہ میں چلائی جارہی ہیں جبکہ تلنگانہ کی بسوں کو آندھرا میں چلانے کی اجازت نہیں ۔ وزیر ٹرانسپورٹ نے اصل سوال کے جواب میں کہا کہ روڈ ٹرانسپورٹ کارپوریشن کی تقسیم کا عمل ابھی باقی ہے تاہم آندھرا اور تلنگانہ کے اکاؤنٹس علحدہ طور پر دیکھے جارہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ آر ٹی سی مختلف وجوہات کے سبب خسارہ میں ہے اور حکومت اسے نقصانات سے اُبھارنے کی کوشش کررہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ آر ٹی سی سے 176 سرویسیس حیدرآباد کے مختلف مقامات سے چلائی جارہی ہیں جن میں 28 بین ریاستی سرویسیس شامل ہیں۔ آر ٹی سی اپنی خدمات میں مزید توسیع کا منصوبہ رکھتا ہے۔ انہوں نے اعتراف کیا کہ آر ٹی سی کے بعض ڈپو فائدہ میں ہیں جبکہ زیادہ تر خسارہ سے دوچار ہیں۔ حکومت خسارہ کی وجوہات کا جائزہ لے رہی ہے تاکہ ادارہ کو منافع بخش بنایا جاسکے۔

TOPPOPULARRECENT