Wednesday , September 20 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ میں انجینئرنگ تعلیم مہنگی ہونے والی ہے

تلنگانہ میں انجینئرنگ تعلیم مہنگی ہونے والی ہے

نامور انجینئرنگ کالجس کی فیس میں اضافہ کا امکان
حیدرآباد ۔ 26 ۔ اپریل : ( سیاست نیوز ) : تلنگانہ میں رواں سال سے انجینئرنگ تعلیم مہنگی ہونے والی ہے جب کہ تمام سرکردہ خانگی انجینئرنگ کالجس امکان ہے کہ سالانہ فیس ایک لاکھ پچاس ہزار روپئے سے بڑھا کر دو لاکھ پچاس ہزار روپئے کردیں گے اور انجینئرنگ سیٹ کسی بھی کالج میں پچاس ہزار تا ایک لاکھ روپئے کے درمیان دستیاب ہوگی اس کا انحصار کالج کی انفرادی ساکھ پر ہوگا ۔ بڑے اور نامور کالجس میں فیس میں زیادہ اور دوسرے کالجس میں اوسط اضافی کا امکان ہے ۔ مجموعی طور پر فیس میں تیس فیصد اضافہ ہوسکتا ہے ۔ تعلیمی ریکارڈ اور بنیادی سہولتوں کی فراہمی کی اساس پر داخلہ و فیس ریگولیشن کمیٹی کالجس کے لیے فیس میں اضافہ تجویز کرے گی ۔ آخری مرتبہ ایسا عمل سال 2013-14 کے لیے کیا گیا تھا ۔ جو تین سال کے لیے تھا ۔ اضافہ فیس کے تعین کا عمل امکان ہے ۔ مئی کے پہلے ہفتہ تک مکمل کرلیا جائے گا بعض خانگی انجینئرنگ کالجس کروڑہا روپئے کے اخراجات بتاتے ہوئے فیس میں بے تحاشہ اضافہ کے لیے کوشاں ہیں ۔ لیکن ریاستی حکومت کالجس کے معیار اور بنیادی سہولتوں کی فراہمی پر سخت گیر موقف رکھتی ہے ۔ بیشتر کالجس فیس میں اضافہ کے خواہاں ہیں ۔ انہیں طلبہ کی تعداد میں کمی کی پرواہ نہیں ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT