Saturday , September 23 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ میں بی جے پی مستحکم نہیں ہوسکتی ‘ اتم کمار

تلنگانہ میں بی جے پی مستحکم نہیں ہوسکتی ‘ اتم کمار

ٹی آر ایس کے کئی قائدین کانگریس سے ربط میں رہنے کا دعوی
حیدرآباد ۔ یکم مئی ( این ایس ایس ) صدر پردیش تلنگانہ کانگریس کمیٹی اتم کمار ریڈی نے کہا کہ چیف منسٹر چندر شیکھر راؤ کے قریبی افراد خاندان کے سوا کئی ٹی آر ایس قائدین ان سے رابطہ میں ہیں اور ٹی آر ایس سے کئی قائدین کانگریس میں شامل ہونگے ۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی کی تلنگانہ میں کوئی طاقت نہیں ہے اور وہ محض خواب دیکھ رہی ہے کہ ریاست میں ہندوووٹوں کی بدولت اسے اقتدار حاصل ہوگا ۔ انہوں نے کہا کہ ٹی آر ایس بھی ابھی سے انتخابی تیاریوں میں جٹ گئی ہے ۔ انہوں نے گاندھی بھون میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ریاستی انٹلی جنس کی جانب سے چیف منسٹر کو وہی بات بتائی جا رہی ہے جو وہ سننا چاہتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ارکان اسمبلی اور وزرا میں بھی یہ ہمت نہیں ہے کہ وہ چیف منسٹر کو حقائق سے واقف کروائیں۔ انہوں نے کہا کہ کسان برادری رضاکارانہ طور پر احتجاج میں شامل ہو رہی ہے ۔ حکومت کا کہنا ہے کہ احتجاج میں شامل ہونے والے کسان نہیں روڈی شیٹرس ہیں تو اسے ان کے نام بتانے چاہئیں۔ انہوں نے سوال کیا کہ ٹی آر ایس قائدین کو بتانا چاہئے کہ کیوں وہ لوگ کسانوں کے ساتھ مارکٹ یارڈز میں جھگڑے کرنے پر مجبور ہوگئے ہیں۔ انہوں نے عثمانیہ یونیورسٹی صدی تقاریب میں تقریر سے گریز کر چیف منسٹر کو تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ یہ در اصل صدر جمہوریہ کی توہین ہے ۔ بی جے پی کے تعلق سے انہوں نے کہا کہ وہ جس طرح شمال میں کامیاب ہوئی ہے اس طرح جنوبی ہند میں کامیاب نہیں ہوگی ۔ اگر بی جے پی ایسا سوچتی ہے تو وہ غلطی پر ہے ۔ تلنگانہ میں ہندو اور مسلمان مل جل کر رہتے ہیں۔ وہ نہیں سمجھتے کہ تلنگانہ میں بی جے پی کبھی طاقتور ہوسکتی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT