Wednesday , June 28 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ میں لینڈ مافیا کو وزراء کی حمایت کا الزام

تلنگانہ میں لینڈ مافیا کو وزراء کی حمایت کا الزام

حیدرآباد ۔ 13 ۔ جون : ( سیاست نیوز ) : ڈاکٹر کے نارائنا اسسٹنٹ جنرل سکریٹری قومی سی پی آئی نے کہا کہ ریاست تلنگانہ میں لینڈ مافیا وسعت اختیار کرگیا ہے ۔ اور اس لینڈ مافیا کو بعض وزراء و ٹی ار ایس قائدین کی بھر پور پشت پناہی اور مدد حاصل ہے ۔ لہذا اگر چیف منسٹر مسٹر کے چندر شیکھر راؤ میں ہمت ہو تو ریاست میں وسعت اختیار کردہ لینڈ مافیا (جس سے خود چیف منسٹر بھی واقف ہیں ) کے خلاف کارروائی کر دکھانے کا چیلنج کیا ۔ ڈاکٹر نارائنا جنہوں نے سی پی آئی کے زیر اہتمام کتہ گوڑم میں منعقدہ ’ سی پی آئی گرجنا ‘ سے خطاب کررہے تھے ۔ تلنگانہ حکومت کو سخت تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ حکومت اپنی کارکردگی کا مظاہرہ کرنے کے لیے صرف زبانی اعلانات ہی کررہی ہے لیکن ان اعلانات پر کوئی عمل آوری نہیں ہورہی ہے ۔ سی پی آئی قومی قائد نے بتایا کہ حکومت کی جانب سے اب تک جتنی اسکیمات کا اعلان کیا گیا ان اسکیمات میں کوئی بھی اسکیم پر صد فیصد عمل آوری نہیں ہورہی ہے ۔ اور اسکیمات کا اعلان کرتے ہوئے کافی گرم جوشی دکھائی جاتی ہے اور کرنے کے بعد کوئی گرم جوشی کا مظاہرہ دکھائی نہیں دیتا ہے ۔ جس کی وجہ سے عوام تک ان اسکیمات کی رسائی نہیں ہو پارہی ہے ۔ ڈاکٹر نارائنا نے حکومت کو حدف ملامت بناتے ہوئے کہا کہ بیگم پیٹ میں واقع چیف منسٹر کیمپ آفس کے پاس 12 جون کی صبح کنٹراکٹ ملازمین کی بڑی تعداد نے زبردست احتجاج منظم کیا اور خدمات کو باقاعدہ بنانے کا مطالبہ کررہے تھے اور احتجاجی زبردست احتجاجی نعرے بلند کرتے ہوئے کیمپ آفس میں داخل ہونے کی کوشش کررہے تھے لیکن پولیس نے ان پر قابو پاتے ہوئے ان تمام احتجاجی کنٹراکٹ ملازمین کو گرفتار کرلیا ۔۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT