Saturday , October 21 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ میں مزید 23 انجینئرنگ کالجس بند ہوجائیں گے

تلنگانہ میں مزید 23 انجینئرنگ کالجس بند ہوجائیں گے

90 انجینئرنگ کالجس پہلے ہی بند ہوچکے، داخلوں کی کشش ختم

حیدرآباد 23 اپریل (سیاست نیوز) تلنگانہ میں انجینئرنگ کالجس میں داخلے کم ہوگئے ہیں۔ نشستیں زیادہ ہیں، طلبہ کم ہوگئے۔ انجینئرنگ تعلیم کی کشش ماند پڑگئی۔ 23 انجینئرنگ کالجس داخلے نہ ہونے کی وجہ سے بند ہونے کے مرحلہ میں ہیں۔ ان کالجس نے آل انڈیا کونسل آف ٹکنیکل ایجوکیشن سے کالج بند کرنے کی اجازت طلب کی ہے۔ سال 2014-15 ء سے جملہ 90 کالجس اس بنیاد پر بند ہوچکے ہیں۔ اب 23 کالجس تعلیمی سال 2017-18 ء سے بند ہوتے ہیں تو تلنگانہ میں 4 ہزار انجینئرنگ سیٹس کم ہوجائیں گی۔ کالجس کے انتظامیہ نے کہاکہ تلنگانہ حکومت کی طرف سے فیس باز ادائیگی بقایہ جات کی رقومات جاری نہ کئے جانے سے انجینئرنگ کالجس کا دیوالیہ نکل گیا ہے۔ حکومت نے سال 2016-17 ء کے لئے فنڈس ہنوز جاری نہیں کئے ہیں۔ ہر کالج کو کام کاج جاری رکھنے ماہانہ پانچ تا چھ کروڑ روپے کی ضرورت ہوتی ہے۔ پہلے کالجس خانگی ذرائع سے قرض لیا کرتے تھے۔ نوٹ بندی کے ساتھ یہ امکانات بھی ختم ہوگئے۔

TOPPOPULARRECENT