Sunday , September 24 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ میں نیشنل پاپولیشن رجسٹر کو آدھار سے منسلک کرنے کا آغاز

تلنگانہ میں نیشنل پاپولیشن رجسٹر کو آدھار سے منسلک کرنے کا آغاز

15 دسمبر تک مردم شماری خاندانوں کی بنیاد پر اعداد و شمار جمع کیا جائے گا
حیدرآباد ۔ 16 ۔ نومبر : ( سیاست نیوز ) : ریاست تلنگانہ میں نیشنل پاپولیشن رجسٹر کو آدھار سے منسلک کرنے کے عمل کا آغاز ہوچکا ہے اور ریاستی سطح پر کی جانے والی مردم شماری کے دوران شمار کنندگان افراد و خاندانوں کی بنیاد پر ڈاٹا جمع کرتے ہوئے ریکارڈ اکٹھا کریں گے ۔ 16 نومبر تا 15 دسمبر جاری رہنے والی اس مردم شماری کے دوران سرکاری طور پر مقرر کردہ شمار کنندگان گھر گھر پہنچ کر مختلف دستاویزات جیسے آدھار کارڈ ، راشن کارڈ ، ڈرائیونگ لائسنس ، ووٹر شناختی کارڈ کی بنیاد پر اندرا جات مکمل کریں گے ۔ رجسٹرار جنرل اینڈ سپنس کمشنر آف انڈیا کی جانب سے 10 سال میں ایک مرتبہ قومی مردم شماری کروائی جاتی تھی اور 2010 میں مردم شماری کا عمل مکمل کیا گیا تھا جس کے جملہ ریکارڈ یکجا کرنے کے لیے ایک سال کی مدت ہوئی اور 2011 میں مردم شماری رپورٹ جاری کردی گئی ۔ ریاست تلنگانہ میں کئے جانے والے اس سروے میں نیشنل پاپولیشن رجسٹر میں درج اعداد و شمار کے علاوہ 2011 کی مردم شماری رپورٹ کو مد نظر رکھتے ہوئے ڈاٹا تیار کیاجائے گا اور شمار کنندگان شہریوں کے موبائیل نمبر بھی حاصل کریں گے تاکہ NPR میں انہیں درج کیا جاسکے ۔ اندرون 5 برس کی جانے والی اس مردم شماری کے بعد NPR میں اندراجات و حذف کرنے کا عمل شروع کیا جائے گا ۔ ریاست تلنگانہ کے 10 اضلاع میں اس کام کی تکمیل کے لیے 1.5 لاکھ اساتذہ کو مامور کیا گیا ہے جو کہ شمارکنندگان کی حیثیت سے خدمات انجام دیں گے ۔ ان اساتذہ میں بیشتر اساتذہ کا تعلق سرکاری اسکولوں سے ہے جو کہ اس ایک ماہ کے طویل پروگرام کے دوران گھر گھر پہنچ کر ریکارڈ اکٹھا کریں گے ۔ اس پورے عمل کی نگرانی ضلع واری اساس پر ضلع انتظامیہ کے سپرد کی گئی ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT