Saturday , September 23 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ میں یوم اقلیتی بہبود و یوم تعلیم منانے کا فیصلہ 11 نومبر کو مقرر ، محکمہ اقلیتی بہبود کا فیصلہ ، پانچ اداروں کو ذمہ داری

تلنگانہ میں یوم اقلیتی بہبود و یوم تعلیم منانے کا فیصلہ 11 نومبر کو مقرر ، محکمہ اقلیتی بہبود کا فیصلہ ، پانچ اداروں کو ذمہ داری

حیدرآباد ۔ 4 ۔ نومبر ( سیاست نیوز) محکمہ اقلیتی بہبود نے 11 نومبر کو مولانا ابوالکلام آزاد کی یوم پیدائش کے موقع پر یوم اقلیتی بہبود اور یوم تعلیم کے طور پر منانے کا فیصلہ کیا ہے۔ اس سلسلہ میں 5 اقلیتی اداروں کو انتظامات کی ذمہ داری دی گئی اور رویندرا بھارتی میں منعقد ہونے والے پروگرام پر ڈھائی لاکھ روپئے کے خرچ کا تخمینہ کیا گیا ہے۔ حج کمیٹی ، اردو اکیڈیمی ، وقف بورڈ ، اقلیتی فینانس کارپوریشن اور کرسچین فینانس کارپوریشن فی کس 50,000 روپئے کی حصہ داری کے ذریعہ پروگرام کے انتظامات میں حصہ لیں گے ۔ اقلیتی فینانس کارپوریشن کی جانب سے ہر اگزیکیٹیو ڈائرکٹر کو 10,000 روپئے مختص کئے جائیں گے تاکہ ہر ضلع میں یوم اقلیتی بہبود کا اہتمام کیا جاسکے۔ ڈھائی لاکھ روپئے سے زائد کے اخراجات کی صورت میں پانچ ادارے مساوی طور پر زائد خرچ کی ذمہ داری لیں گے ۔ حکومت نے یوم اقلیتی بہبود کے سلسلہ میں جن پروگراموں کو قطعیت دی ہے ، ان میں مولانا ابوالکلام آزاد ، قومی ایوارڈ کی پیشکشی سرفہرست ہے۔ ہر سال مختلف شعبوں میں نمایاں خدمات انجام دینے والی شخصیت کو یہ ایوارڈ پیش کیا جاتا ہے ۔ اس تقریب میں شادی مبارک اسکیم کے بعض منظورہ درخواست گزاروں کو منظوری کے مکتوب حوالے کئے جائیں گے ۔ اقلیتی فینانس کارپوریشن کی بینکوں سے مربوط سبسیڈی کی اسکیم کے استفادہ کنندگان میں منظوری کے دستاویزات حوالے کئے جائیں گے۔ بیسٹ اردو ٹیچرس اور بیسٹ اردو اسٹوڈنٹس ایوارڈس پیش کئے جائیں گے جن کا انتخاب ماہرین پر مشتمل کمیٹی کے ذریعہ کیا جائے گا۔ رویندرابھارتی کے بیرونی حصہ میں اقلیتی اداروں کی جانب سے اسٹالس قائم کرتے ہوئے اقلیتی اسکیمات کی تشہیر کی جائے گی۔

TOPPOPULARRECENT