Wednesday , August 16 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ کانگریس کی محاذی تنظیموں کی کارکردگی مثالی

تلنگانہ کانگریس کی محاذی تنظیموں کی کارکردگی مثالی

ہر سطح پر کمیٹیاں تشکیل دے کر پارٹی کو مستحکم بنانے مہم
حیدرآباد ۔ 14 ۔ فروری : ( سیاست نیوز) : کانگریس کے قومی قائد کے راجو نے تلنگانہ کانگریس کی محاذی تنظیموں کی کارکردگی کو سارے ملک کے لیے مثالی قرار دیا اور گاوں سے ریاستی سطح کی کمیٹیاں تشکیل دیتے ہوئے پارٹی کو مستحکم کرنے کا مشورہ دیا ۔ صدر تلنگانہ پردیش کانگریس اقلیت ڈپارٹمنٹ محمد خواجہ فخر الدین نے محاذی تنظیموں کے احتجاجی جلسوں میں کانگریس کے نائب صدر راہول گاندھی کی شرکت کو یقینی بنانے پر زور دیا ۔ اج اندرا بھون میں تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی کے محاذی تنظیموں ایس سی ، ایس ٹی ، بی سی اور اقلیت ڈپارٹمنٹ کے صدور اور اہم قائدین کا اجلاس منعقد ہوا جس کی صدر تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی کیپٹن اتم کمار ریڈی نے صدارت کی ۔ مہمان خصوصی کی حیثیت سے صدر اے ائی سی سی ایس سی ڈپارٹمنٹ کے راجو نے شرکت کی ۔ اس کے علاوہ ورکنگ پریسیڈنٹ تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی ملو بٹی وکرامارک سابق مرکزی وزیر بلرام نائیک صدر تلنگانہ پردیش کانگریس اقلیت ڈپارٹمنٹ محمد خواجہ فخر الدین ترجمان سید فاروق پاشاہ قادری کے علاوہ دوسرے موجود تھے ۔ کانگریس کے قومی قائد کے راجو نے کہا کہ سارے ملک میں تلنگانہ واحد ریاست ہے جہاں کانگریس کی محاذی تنظیمیں کافی سرگرم ہیں ۔ انہوں نے کانگریس کے تمام محاذی تنظیموں کے صدور کو گاوں سے ریاست تک کمیٹیاں تشکیل دینے اور ریاستی و مرکزی حکومت کی عوام دشمن پالیسیوں کے خلاف احتجاجی مہم شروع کرنے کے لیے سالانہ کیلنڈر تیار کرنے کا مشورہ دیا ۔ انہوں نے ایس سی ڈپارٹمنٹ کو ایس سی طبقات کے ایس ٹی ڈپارٹمنٹ کو ایس ٹی طبقات کے اقلیت ڈپارٹمنٹ کو اقلیتوں اور بی سی ڈپارٹمنٹ کو بی سی طبقات کے مسائل اور حکومتوں کی جانب سے کئے گئے وعدوں پر عدم عمل آوری کے خلاف احتجاجی حکمت عملی تیار کرنے اور سماج کے تمام طبقات سے اپنے تعلقات بڑھاتے ہوئے ان کے حقوق کے لیے جدوجہد کرنے کا مشورہ دیا۔ صدر تلنگانہ پردیش کانگریس اقلیت ڈپارٹمنٹ محمد خواجہ فخر الدین نے ان کی جانب سے گذشتہ دیڑھ سال کے دوران کیے گئے احتجاجی پروگرامس جلسے ریالیاں ، کارنر میٹنگس اور سمینارس پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ تلنگانہ کے تمام اضلاع میں کانگریس اقلیت ڈپارٹمنٹ کی کمیٹیاں تشکیل دے دی گئی ۔ بیشتر اضلاع میں منڈل سطح کی کمیٹیاں تشکیل دے دی گئی ہیں ۔ دیہی سطح پر کمیٹیاں تشکیل دینے کا کام جاری ہے ۔ تلنگانہ پردیش کانگریس اقلیت ڈپارٹمنٹ کی جانب سے 12 فیصد مسلم تحفظات کی تحریک چلاتے ہوئے حکومت پر دباؤ بنایا گیا ۔ تلنگانہ حکومت نے جاریہ سال 2016-17 میں اقلیتوں کے لیے بجٹ میں 1205 کروڑ روپئے کی گنجائش فراہم کی ہے ۔ مگر افسوس کے ساتھ کہنا پرتا ہے حکومت نے ابھی تک صرف 400 کروڑ روپئے کی اجرائی عمل میں لائی ہے ۔ جس کے خلاف بھی کانگریس اقلیت ڈپارٹمنٹ کی جانب سے آواز ٹھائی جارہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ وہ ٹی آر ایس اور بی جے پی کے زیر قیادت این ڈی اے حکومتوں کی وعدے خلافی کے خلاف احتجاجی منصوبہ بندی تیار کررہے ہیں ۔ کانگریس کے محاذی تنظیموں کے جلسوں میں اگر کانگریس کے نائب صدر راہول گاندھی شرکت کرتے ہیں تو اس سے نہ صرف محاذی تنظیموں کی مسابقت میں اضافہ ہوگا اور ساتھ ہی محاذی تنظیموں کے قائدین و کارکنوں میں ایک نیا جوش و خروش پیدا ہوگا ۔۔

TOPPOPULARRECENT