Saturday , August 19 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ کو تھیسلیمیا سے آزاد ریاست بنانے کا عزم

تلنگانہ کو تھیسلیمیا سے آزاد ریاست بنانے کا عزم

15 جولائی کو مفت تشخیص کا انتظام ، چندرا کانت اگروال کا خطاب
حیدرآباد۔13جولائی (سیاست نیوز) تھیلسیمیا اینڈ سکل سیل سوسائٹی TSCS نے تلنگانہ کو تھیلسیمیا سے آزاد ریاست بنانے کے عزائم کا اظہار کیا ہے۔ اس مقصد کے لئے تھیلسیمیا سے متعلق شعور بیداری مہم کا آغاز کیا جارہا ہے۔ اسی مقصد کے تحت 15 جولائی کو شام 6 بجے ستیہ سائی نگم سری نگر کالونی حیدرآباد میں ’’تھال بیٹس 2017‘‘ THAL BEATS کا اہتمام کیا ہے جس میں سوسائٹی سے وابستہ بچے کلچرل پروگرامس پیش کریں گے۔ اسی دن مفت تشخیص کا بھی اہتمام کیا جائے گا۔ اس موقع پر مسٹر پی پارتھا سارتھی آئی اے ایس کمشنر سکریٹری اگریکلچرل پروڈکشن‘ آر وی چندراودھن آئی اے ایس کمشنر نشہ بندی و آبکاری‘ سُکھ سوہت سنگھ آئی اے ایس ڈپٹی کنٹرولر فینانشیل اڈوائزر وزارت دفاع حکومت ہند مہمانان خصوصی کے طور پر شرکت کریں گے جبکہ کئی اور سرکردہ شخصیات یہاں موجود ہوں گی۔ تھیلسیمیا اینڈ سکل سیل سوسائٹی جس کا تھال کیر سنٹرشیورام پلی میں قائم کیا جارہا ہے‘ 25 ہزار سکوائر فٹ پر 5 منزلہ عمارت میں ڈائگناسٹک لیاب‘ ریسرچ لیاب‘ بی ایم ٹی سنٹر (ہڈیوں کے مغز کی منتقلی سے متعلق)‘بلڈ بینک‘ ٹرانسفیوژن سنٹر اور کونسلنگ سنٹر پر مشتمل ہوگا۔ آج یہاں میڈیا پلس آڈیٹوریم میں ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے صدر TSCS مسٹر چندراکانت اگروال نے یہ بات بتائی۔ اس موقع پر شریمتی رتنا ولی نائب صدر ‘ جناب علیم بیگ جوائنٹ سکریٹری بھی موجود تھے۔ مسٹر اگروال نے بتایا کہ تھیلسیمیا ایک موروثی مرض ہے جو جسم میں خون کی بے قاعدگی کی وجہ سے پیدا ہوتا ہے ۔ اس مرض سے متاثرہ بچے جسمانی بے قاعدگی اور معذوری کا شکار ہوتے ہیں۔ TSCS اس مرض سے متعلق شعور کی بیدار اور اس کے روم تھام کے لئے اقدامات کی غرض سے 1989ء میں قائم کی گئی ہے۔ 29 برس کے دوران یہ تھیلسیمیا سے متاثرہ بچوں کی خدمات انجام دینے والی دنیا کی سب سے بڑی این جی او بن گئی ہے ۔ آندھراپردیش اور تلنگانہ میں یہ واحد ادارہ ہے جہاں خون کی بے قاعدگی کا علاج ہوتا ہے اور جہاں بلڈ بینک بھی ہے۔ حیدرآباد میں 2,312 متاثرہ بچے سوسائٹی سے رجسٹرڈ ہیں۔ سوسائٹی ان متاثرین کے عرصہ حیات میں اضافہ کے لئے ممکنہ اقدامات کرتی ہے۔ سوسائٹی کا اپنا ہاسپٹل‘ بلڈ بینک‘ ڈائیگناسٹک لیاب‘ ریسرچ لیاب‘ معاشرہ کے غریب ترین بچوں کی مفت خدمات انجام دیتی ہے ۔ سوسائٹی کو ایس ایس سی کے نصاب میں شامل کیا گیا ہے۔ تاحال اس نے 73 ہزار متاثرین کو خون کی منتقلی میں مدد دی ہے۔ اس کے علاوہ 1672 شعور بیداری کیمپ منعقد کئے۔ مختلف ذرائع سے 10 ملین سے زائد افراد تک رسائی حاصل کی۔اس موقع پر جناب مرزا عبدالعلیم بیگ کے علاوہ دیگر موجود تھے۔

TOPPOPULARRECENT