Tuesday , September 26 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ کی ایک کروڑ اراضی کو قابل کاشت بنانے حکومت کی حکمت عملی

تلنگانہ کی ایک کروڑ اراضی کو قابل کاشت بنانے حکومت کی حکمت عملی

آج چیف منسٹر کے سی آر کا پاور پوائنٹ پریزنٹیشن ، وزیر زراعت پوچارام سرینواس ریڈی
حیدرآباد ۔ 30 ۔ مارچ : ( سیاست نیوز ) : ریاستی وزیر زراعت مسٹر پوچارام سرینواس ریڈی نے کہا کہ تلنگانہ میں ایک کروڑ ایکڑ اراضی کو قابل کاشت بنانے کے لیے حکومت نے حکمت عملی تیار کی ہے ۔ 31 مارچ کو چیف منسٹر کے سی آر پاور پوائنٹ پریزنٹیشن پیش کرتے ہوئے منصوبے سے ارکان اسمبلی کو واقف کرائیں گے ۔ اسمبلی میں خشک سالی مباحث سے خطاب کرتے ہوئے ریاستی وزیر نے کہا کہ حکومت تلنگانہ خشک سالی کا خاتمہ کرنے کے لیے مستقل حکمت عملی تیار کی ہے ۔ ریاست میں 1.57 کروڑ ایکڑ اراضی قابل کاشت ہے ۔ تاہم پانی کی عدم دستیابی سے صرف 57 لاکھ ایکڑ اراضی پر کاشت ہورہی ہے ۔ چیف منسٹر تلنگانہ نے ایسی آبپاشی پالیسی تیار کی ہے ۔ جس سے ایک کروڑ ایکڑ اراضی کو قابل کاشت بنانے میں بڑی حد تک کامیابی حاصل ہوگی ۔ آبپاشی پراجکٹس کی تعمیرات ہی اس کا واحد حل ہے ۔ تلنگانہ میں 14 فیصد بارش کم ہوئی ہے ۔ مرکزی حکومت کے رہنمایانہ خطوط کی بنیاد پر ریاست کے 231 منڈلوں کو خشک سالی سے متاثرہ قرار دیا گیا ہے ۔ وہ دونوں ڈپٹی چیف منسٹرس کے ساتھ دہلی پہونچ کر خشک سالی پر مرکزی حکومت سے نمائندگی کرچکے ہیں ۔ مرکزی حکومت نے فوری ٹیم کو روانہ کیا ۔ ٹیم نے تلنگانہ کے مختلف اضلاع میں دورہ کرنے کے بعد مرکزی حکومت کو رپورٹ پیش کی ہے ۔ مرکز نے تلنگانہ کے لیے 791 کروڑ روپئے منظور کئے جس میں 56 کروڑ روپئے جاری کئے ۔ ماباقی فنڈز آئندہ ماہ جاری ہونے کے قوی امکانات ہیں ۔ پانی کی قلت پر قابو پانے کے لیے 3000 بورویلز استعمال کئے جارہے ہیں اور 1033 ٹینکرس کی خدمات سے بھی استفادہ کیا جارہا ہے ۔ تلنگانہ حکومت نے اضلاع میں پانی کی قلت اور خشک سالی سے نمٹنے کے لیے 329 کروڑ روپئے جاری کئے ہیں ضرورت پڑنے پر حکومت مزید فنڈز جاری کرے گی ۔ اس کے علاوہ اضلاع میں بھی عوامی منتخب نمائندوں کا اجلاس طلب کرتے ہوئے ان سے بھی تجاویز وصول کئے جائیں گے ۔۔

حیدرآباد میں یکم تا 3 اپریل کسان سواراج سمیلن
ماہرین زراعت کے علاوہ مختلف شخصیتوں کی شرکت
حیدرآباد ۔ 30 ۔ مارچ : ( سیاست نیوز ) : کسان سواراج سمیلن یکم تا 3 اپریل کو حیدرآباد میں منعقد ہوگا ۔ جس کا مقصد ہندوستان کے کاشت کاروں کے مسائل پر پالیسی پر غور و خوص کرنا ہے ۔ یہ بات مسز کویتا کروگنٹی نیشنل کنوینر آشا کسان سواراج نیٹ ورک نے ایک پریس کانفرنس میں بتائی ۔ اس موقع پر ان کے ہمراہ مسرس کرن ویساریتو سواراج ویدیکا ، روی کنیگنٹی سنٹر فار سٹینل ایگریکلچر اور دیگر بھی موجود تھے ۔ انہوں نے اس موقع پر بتایا کہ سمیلن میں ڈاکٹر دیویندر شرما ، پروفیسر یوگیندر یادو ، اجئے ویرجھاکر ، ڈاکٹر کلوڈا لو بارس اور دیگر ماہرین زراعت مخاطب کریں گے ۔ جب کہ سمیلن میں پروفیسر کودنڈا رام چیرمین تلنگانہ پولٹیکل جے اے سی ، وی روبھیندر شیورا راؤ سابق وزیر ، ای اے ایس شرما سابق مرکزی سکریٹری ، پروفیسر راما ملکوٹے ، پروفیسر کے آر چودھری ، پروفیسر نرسمہا ریڈی آئی سی ایس ایس آر اور دیگر بھی شرکت کریں گے ۔۔

TOPPOPULARRECENT