Wednesday , July 26 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ کی باوقار اسکیم مشن بھاگیرتا کی ماہرین نے ستائش کی

تلنگانہ کی باوقار اسکیم مشن بھاگیرتا کی ماہرین نے ستائش کی

وزیر بلدی نظم و نسق کے ٹی آر کا امریکہ میں پریزینٹیشن ۔ ماحولیاتی آبی وسائل کانگریس سے خطاب
حیدرآباد 23 مئی (سیاست نیوز) ریاستی وزیر بلدی نظم و نسق کے ٹی آر نے امریکہ میں منعقدہ ماحولیات واٹر ریسورس کے اجلاس میں تلنگانہ کی باوقار اسکیم مشن بھاگیرتا پر روشنی ڈالی جس کی ماہرین نے زبردست ستائش کی۔ تلنگانہ میں سرمایہ کاروں کو راغب کرنے کیلئے کے ٹی آر امریکہ کے دورے پر ہیں۔ انھوں نے امریکہ کے شہر شاکرا مینٹو میں منعقدہ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ حکومت تلنگانہ عوام کو صاف ستھرا پینے کا پانی سربراہ کرنے کے لئے بڑے پیمانے پر اقدامات کررہی ہے۔ مشن بھاگیرتا کے تحت ہر گھر کو نل سے پینے کا پانی سربراہ کرنے کے لئے حکومت تلنگانہ جو اقدامات کررہی ہے اس کی ملک بھر میں مثال نہیں ملتی۔ اقوام متحدہ کے تیار کردہ رہنمایانہ خطوط کے اساس پر یہ اسکیم تیار کی گئی ہے۔ اس کے علاوہ انٹرنیٹ کی سہولت کو عام کرتے ہوئے ہر شہری کو دنیا سے جوڑنے کے عملی اقدامات کئے جارہے ہیں۔ تلنگانہ فائبر گرڈ کے ذریعہ ای ہیلت، ای ایجوکیشن جیسے شعبوں میں بڑے پیمانے پر تبدیلیاں واقع ہوئی ہیں۔ تلنگانہ کے 46 ہزار تالابوں کا احیاء کیا جارہا ہے جس سے جہاں پانی کے وسائل میں اضافہ ہورہا ہے وہیں زیرزمین پانی کی سطح میں بھی مثبت تبدیلی دیکھنے میں آرہی ہے۔ بورویلز پر انحصار کرنے والے زرعی شعبہ کو بہت زیادہ فائدہ ہورہا ہے۔ کے ٹی آر کے خطاب اور تلنگانہ حکومت کی منفرد اسکیم کی کانفرنس میں شرکت کرنے والے دانشوروں، ماہرین آبپاشی نے زبردست ستائش کی۔ حکومت تلنگانہ کی اسکیم مشن بھاگیرتا کو دنیا کے دوسرے ممالک کے لئے قابل تقلید قرار دیا گیا۔ آج دوپہر امریکہ میں وزیر آئی ٹی کے ٹی آر نے سلیکان ویالی کے سان ہوسے شہر میں سان مینو آفس پہونچ کر ادارے کے چیف ایگزیکٹیو آفیسر جیورسولہ سے ملاقات کی۔ کے ٹی آر نے تلنگانہ الیکٹرانک انڈسٹری کے قیام کے لئے سام مینو کے نمائندوں کو تلنگانہ آنے کی دعوت دی۔ کے ٹی آر کیلئے ٹائی سلیکان ویالی چیاپٹر I نے طعام کا اہتمام کیا۔ سلیکان ویالی کے مختلف کمپنیوں کے چیف ایگزیکٹیو آفیسرس نے اس دعوت میں شرکت کی۔ تلنگانہ حکومت کی صنعتی پالیسی کا بھی جائزہ لیا گیا۔ اس دعوت میں ٹائی ٹیلی کام ویالی کے نمائندے راجو ریڈی، رام ریڈی، اڈوبی کمپنی سی ای او شانتا نونارائن، اروبانیٹ ورک کے بانی کیرتی ملکوٹے کے علاوہ دیگر شخصیتوں نے شرکت کی۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT