Thursday , August 24 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ کے اضلاع کریم نگر ، کھمم اور نظام آباد میں اربن ڈیولپمنٹ اتھارٹیز کا قیام

تلنگانہ کے اضلاع کریم نگر ، کھمم اور نظام آباد میں اربن ڈیولپمنٹ اتھارٹیز کا قیام

چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ کی منظوری ، ضلعوں کو شہر کی طرز پر ترقی کے اقدامات
حیدرآباد۔6جولائی (سیاست نیوز) تشکیل تلنگانہ کے بعد سے ریاست تلنگانہ کی ترقی کے عمل کو تیز رفتار بنانے کیلئے حکومت کی جانب سے کئے جانے والے اقدامات میں شہری ترقیاتی اداروں کے قیام کی سمت پیشرفت کی جانے لگی ہے اور حکومت تلنگانہ نے ریاست میں مزید تین اضلاع کیلئے شہری ترقیاتی اداروں کے قیام کا فیصلہ کیا ہے۔ چیف منسٹر مسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے کریم نگر‘ کھمم اور نظام آباد میں اربن ڈیولپمنٹ اتھاریٹی کے قیام کو منظوری دیدی ہے۔ 2014میں ریاست تلنگانہ کی تشکیل اور تلنگانہ راشٹر سمیتی کے اقتدار حاصل کرنے کے بعد حکومت نے فوری ریاست تلنگانہ کے اضلاع کی تشکیل جدید کا عمل شروع کردیا اور ریاست آندھراپردیش کی تقسیم کے بعد تلنگانہ میں جو 10اضلاع موجود تھے ان میں 21اضلاع کا اضافہ کرتے ہوئے ریاست کے اضلاع کی تعداد کو 31کردیا گیا ۔ ریاست تلنگانہ کی تشکیل کے بعد حکومت کی جانب سے انتظامی امور کو بہتر بنانے کیلئے اضلاع کی تنظیم جدید کرتے ہوئے ان اضلاع کے رقبہ و آبادی کو کم کرتے ہوئے ان کی سرحدوں کو متعین کرتے ہوئے اعلامیہ جاری کردیا گیا تھا اور اب حکومت نے ان اضلاع کی ترقی کیلئے شہری ترقیاتی اداروں کے قیام کا فیصلہ کیا ہے۔ چیف منسٹر کی جانب سے کئے گئے اعلان کے مطابق ریاست کے تین اضلاع کھمم ‘ کریم نگر اور نظام آباد میں اربن ڈیولپمنٹ اتھاریٹی کی تشکیل کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ ریاستی محکمہ بلدی نظم و نسق کے مطابق شہر حیدرآباد میں موجود حیدرآباد میٹروپولیٹین اربن ڈیولپمنٹ اتھاریٹی اور قلی قطب شاہ اربن ڈیولپمنٹ اتھاریٹی کے علاوہ کاکتیہ اربن ڈیولپمنٹ اتھاریٹی کے طرز پر یہ اتھاریٹیز قائم کی جائیں گی۔ عہدیداروں نے بتایا کہ حکومت کی جانب سے کئے جانے والے اس اقدام کے بعد ان اضلاع کو دیہی علاقوں کی فہرست سے نکالتے ہوئے انہیں شہری علاقوں کے طرز پر ترقی دینے کے اقدامات کئے جائیں گے اور ان اضلاع میں اراضیات کے رجسٹریشن و دیگر امورکا بھی تعین کیا جائے گا۔حکومت کی جانب سے تین نئے شہری ترقیاتی اداروں کی تشکیل کو منظوری کے بعد ان اضلاع کو بھی شہری علاقوں کے طرز پر ترقی دینے کی منصوبہ بندی کا عمل شروع کیا جا چکا ہے اور ان اداروں کی تشکیل کے عمل کی تکمیل کے بعد ان اداروں کی جانب سے وسیع منصوبہ بندی کو قطعیت دی جائے گی اور اداروں کے ذمہ داروں کی نامزدگی کے بعد وہی یہ فیصلہ کریں گے۔

TOPPOPULARRECENT