Thursday , September 21 2017
Home / شہر کی خبریں / تلنگانہ کے یونیورسٹیز ملازمین کے مسائل حل کرنے پر زور

تلنگانہ کے یونیورسٹیز ملازمین کے مسائل حل کرنے پر زور

پروفیسر کودنڈارام کی قیادت میں کڈیم سری ہری سے وفد کی ملاقات

حیدرآباد ۔ 23 جولائی (سیاست نیوز) ریاست تلنگانہ کی مختلف یونیورسٹیوں کے ملازمین کی مشترکہ مجلس (جوائنٹ ایکشن کمیٹی) عمل کے قائدین نے صدرنشین تلنگانہ پولیٹیکل جوائنٹ ایکشن کمیٹی پروفیسر کودنڈارام کی قیادت میں آج ایک وفد ڈپٹی چیف منسٹر امورتعلیم مسٹر کے سری ہری سے ملاقات کی اور گذشتہ ایک عرصہ سے تلنگانہ میں واقع یونیورسٹیوں کے ملازمین وغیرہ کو درپیش مشکلات و مصائب سے واقف کروایا اور ان تمام مسائل و مشکلات کا تفصیلی جائزہ لیتے ہوئے فی الفور یکسوئی کیلئے مؤثر و مثبت اقدامات کرنے کا پرزور مطالبہ کیا۔ پروفیسر کودنڈارام نے کے سری ہری سے کہا کہ ایک طویل عرصہ سے یونیورسٹیوں کیلئے مستقل وائس چانسلروں کی عدم موجودگی کے باعث یونیورسٹی کی کارکردگی زبردست متاثر ہورہی ہے اور کئی نئے نئے مسائل پیش آرہے ہیں۔ لہٰذا یونیورسٹیوں کی کارکردگی کو فعال بنانے اور معیار تعلیم میں بھی بہتری پیدا کرنے کیلئے عاجلانہ طور پر تمام یونیورسٹیوں کے ملازمین کے دیرینہ حل طلب مسائل و مطالبات کی فوری طور پر یکسوئی کیلئے اقدامات کرنے کے ساتھ ساتھ نئے وائس چانسلروں کے مزید کسی تاخیر کے بغیر فوری طور پر تقررات عمل میں لانے کا حکومت بالخصوص ڈپٹی چیف منسٹرسے پرزور مطالبہ کیا جس پر ڈپٹی چیف منسٹر نے دیرینہ حل طلب مسائل پر چیف منسٹر مسٹر چندرشیکھر راؤ سے تبادلہ خیال کرکے انہیں مکمل طور پر واقف کرواتے ہوئے مسائل کی یکسوئی کیلئے راہ ہموار کرنے اور مؤثر اقدامات کرنے کا وفد کو واضح تیقن دیا۔

پروفیسر کانچایلیا کے خلاف ایف آئی آر کی مذمت : ارکان مانو ٹی اے
حیدرآباد ۔ 23 جولائی (پریس نوٹ) پریسیڈنٹ مولانا آزاد نیشنل اردو یونیورسٹی ٹیچرس اسوسی ایشن MANUUTA کے بموجب ارکان مانوٹی اے پروفیسر کانچایلیا، ڈائرکٹر سی ایس ایس ای آئی پی، مانو، حیدرآباد کی بابت وی ایچ پی کی ہدایت پر پولیس کی جانب سے نوٹس کی اجرائی اور ایف آئی آر درج کرنے کی سختی سے مذمت کرتے ہیں۔ ٹیچنگ برادری کے ارکان کی حیثیت سے وہ پوری طرح پروفیسر کانچا یلیا کے ساتھ کھڑے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT