Sunday , September 24 2017
Home / Top Stories / تمام اچھے لوگوں کو یکجا ہوجانا چاہئے : چیف منسٹر کجریوال

تمام اچھے لوگوں کو یکجا ہوجانا چاہئے : چیف منسٹر کجریوال

نئی دہلی۔19 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) چیف منسٹر دہلی اروند کجریوال نے آج زور دیا کہ بی جے پی سے لڑنے کے لیے تمام اچھے لوگوں کا اتحاد ضروری ہے۔ وہ یہاں اپنے کیرالا کے ہم منصب پی وجین کے ساتھ میٹنگ کے بعد مخاطب تھے۔ چیف منسٹر دہلی نے کہا کہ ملک میں خوف کا ماحول ہے۔ تجارتی برادری، صنعت کار، میڈیا کے لوگ اور عام آدمی ہر کوئی اس ملک کی صورتحال سے خوفزدہ ہے جو غلط روش پر چل پڑی ہے۔ کجریوال نے کیرالاہائوز میں وجین سے ملاقات کے بعد میڈیا سے بات چیت میں کہا کہ انہوں نے ناشتہ کی میٹنگ میں مختلف مسائل پر تبادلہ خیال کیا۔ کجریوال نے کہا کہ انہیں ایسا محسوس ہوتا ہے کہ اقتدار غلط ہاتھوں میں ہے اور وہ ملک کو تباہی کے دہانے کی طرف لے جارہے ہیں۔ اس صورتحال سے لڑنے کے لیے تمام اچھے لوگوں کو ایک پلیٹ فارم پر جمع ہوناچاہئے۔ کجریوال نے جبکہ چیف منسٹر کیرالا وجین ان کے ساتھ موجود تھے، کہا کہ جو بھی مرکز کے خلاف اختلاف کی آواز اٹھائے اسے دبانے کی کوشش کی جارہی ہے۔ ان کے ریمارکس کا پس منظر یہ ہے کہ چند روز قبل بی ایس پی کی سربراہ مایاوتی اور سماج وادی پارٹی کے صدر اکھلیش یادو نے کہا تھا کہ بی جے پی سے لڑنے کے لیے وہ سیاسی قوتوں کا مخلوط بنانے کے لیے تیار ہیں۔ وجین ان دنوں دہلی میں سی پی آئی (ایم) کی سنٹرل کمیٹی میٹنگ میں شرکت کے لیے موجود ہیں۔ انہوں نے کجریوال سے اتفاق کیا کہ ملک میں خوف کا ماحول ہے لیکن اس کا یہ مطلب نہیں کہ بی جے پی سے لڑائی کے لیے صرف کانگریس پر انحصار کیا جائے۔ انہوں نے نشاندہی کی کہ ہم سب نے گزشتہ روز دیکھا کہ کس طرح دہلی کا ایک نمایاں کانگریس لیڈر بی جے پی کے کیمپ میں شامل ہوگیا۔ ہمیں ملک کے سیکولر تانے بانے کو متاثر کئے بغیر ان خطرات سے نمٹنے کی ضرورت ہے۔ وجین نے کہا کہ ملک کی صورتحال کافی سنگین ہے۔ ہم نے سماج میں آر ایس ایس کے پیدا کردہ خوف پر تبادلہ کیا۔ چیف منسٹر کیرالا نے کجریوال کے اس مطالبہ کی تائید بھی کی کہ دہلی کو مکمل ریاست کا درجہ عطا کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ مرکز کو دہلی حکومت کو مکمل ریاست کا موقف ضرور دینا چاہئے۔ ان دنوں مرکزی حکومت ریاستوں سے تمام تر اختیارات چھین لینے کی کوشش کررہی ہے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT