Saturday , September 23 2017
Home / مذہبی صفحہ / تم نے خرید کر ہمیںانمول کردیا

تم نے خرید کر ہمیںانمول کردیا

مرسل : ابوزہیر نظامی

آج جہاں دیکھیں وہاں ہر کوئی یہی چاہتاہے کہ وہ ایک بڑا انسان بن جائے ،یہ نظریہ ایک طرح سے بہت اچھا ہے مگر ہمیں یہ دیکھنا ہے کہ انسان آخر بڑا کیسے بن سکتا ہے ؟ اس کے دو سبب ہے ۔
٭ پہلا سبب : یہ ہے کہ سب سے پہلے انسان اپنے خالق حقیقی کی صحیح ڈھنگ سے عبادت کرے ، ریاضت کرے ، ذکرواذکار کرے اور ساتھ ہی ساتھ اس کے احکامات پر عمل پیرا رہنے کی کوشش کرے ۔
٭ دوسرا سبب : یہ ہے کہ انسان حضور نبی کریم ﷺ سے تعلق غلامی جوڑے رکھے یقینا یہ ایک ایسا ذریعہ ہے جس سے انسان نہ صرف کامیاب ہوسکتا ہے بلکہ اس کو ایک مکمل انسان بن کر جینے کا بھر پور موقع فراہم ہوسکتا ہے ۔ یہ طریقہ ہر ایک کو اختیار کرنا بے حد ضروری ہے ۔غلام دراصل کہتے اسے ہیں جو کسی کے ہاتھ بک گیا ہو یا اس نے اپنے آپ کو اس طرح سے پیش کردیا ہو کہ وہ اپنی زندگی ، مال ، جان ، عزت ، اٹھنا ، بیٹھنا ، چلنا اور پھرنا سب کچھ اپنی مرضی سے نہ کرے بلکہ اپنے آقا و مالک کی مرضی کے مطابق حرکت کرنے لگے ۔ اگر یہی منشا ایک انسان کا رہے گا تو اس سے اس کو غلامی کا حق ادا کرنے کا موقع ملے گا۔ہمارا تعلق جب آپ ﷺ سے غلامی کا جڑجائے تو یہی سب سے بڑے نصیب کی بات ہے جب ذات مصطفی ﷺ سے ہماری نسبت قائم ہوجائے اور غلام کی طرح بِک جائے تو سمجھ لینا کہ وہ ایک بہتر غلام ہے جیسا کہ ایک شعر میں کہا گیا ہے کہ
جب تک بکے نہ تھے کوئی پوچھتا نہ تھا
تم نے خرید کر ہمیںانمول کردیا
یعنی اس شعر کے ذریعہ یہ بتلانا مقصود ہے کہ جو بِک جاتے ہیں ان کو اﷲ تعالیٰ کے ذکر اور حضور نبی کریم ﷺ کے عشق میں وہ کیفیتِ جنون حاصل ہوجاتی ہے کہ ہرکوئی رشک کرتا ہے ۔ وہ اﷲ تعالیٰ اور رسول اکرم ﷺ کے ایسے مجنون بن جاتے ہیں کہ دنیا کی ہوش سے بے پرواہ اور مست وبے خود ہوکر انہیں صرف محبوب کی ذات کا ہوش رہ جاتا ہے کیونکہ
محرم ایں ہوش جزبے ہوش نیست
انہیں ذات محبوب سے وہ الفت محبت اور وارفتگی ہو جاتی ہے کہ انہیں محبوب کی خبر نصیب ہوجاتی ہے اور پھر ان کی کوئی خبر نہیں آتی ۔
کاں را کہ خبر شد خبرش بازنیامد
ان کے لئے یاد محبوب وہ عبادت بن جاتی ہے جس کا دوام وتسلسل ان کے لئے راحت ہوجاتا ہے۔
[email protected]

TOPPOPULARRECENT