Tuesday , August 22 2017
Home / پاکستان / توہین رسالت ؐکا مقدمہ:تین کو سزائے موت

توہین رسالت ؐکا مقدمہ:تین کو سزائے موت

اسلام آباد ۔ 28 جون (سیاست ڈاٹ کام) پاکستان کے صوبہ پنجاب کے شہرگوجرانوالہ میں انسداد دہشت گردی کی ایک عدالت نے توہین رسالت ؐکا جرم ثابت ہونے پر تین افراد کو سزائے موت دینے کا حکم دیا ہے۔ سزا پانے والے افراد میں سے ایک مسلمان اور دو عیسائی ہیں اور دو مجرموں کو سزائے موت کے ساتھ 35 برس قید کی سزا بھی دی گئی ہے۔ توہین رسالتؐ کے الزام میں یہ سزائیں گوجرانوالہ کی انسداد دہشت گردی کی عدالت کی جج بشریٰ زمان نے پیر کو دلائل مکمل ہونے پر اپنے فیصلے میں سنائیں۔ فیصلے میں کہا گیا ہے کہ انجم ناز سندھو، جاوید ناز اور جعفر علی توہین رسالت ؐکے مرتکب ہوئے ہیں۔ توہین رسالت کے تینوں مجرموں کے خلاف گوجرانوالہ کے تھانہ سیٹلائٹ ٹاؤن میں 15 مئی 2015 کو تعزیرات پاکستان کی دفعات 295 سی اور 386 کے تحت پولیس کی مدعیت میں مقدمہ درج کیا گیا تھا۔ ایف آئی آر کے مطابق انجم ناز نے پولیس کو شکایت کی تھی کہ جاوید ناز اور جعفر علی نے اسے بلیک میل کرتے ہوئے 20 ہزار روپے ہتھیا لیے ہیں اور مزید 50 ہزار روپے کا مطالبہ کر رہے ہیں۔ پولیس نے جب انجم ناز کی نشاندہی پر جاوید ناز اور جعفر علی کو حراست میں لیا تو معلوم ہوا کہ جاوید ناز کے موبائل فون میں انجم ناز کی توہین رسالت ؐپر مبنی گفتگو کی آڈیو ریکارڈنگ موجود ہے جو اس نے جعفرعلی کو بھی دے دی تھی اور اب دونوں انجم ناز سے پیسوں کا مطالبہ کر کے اسے بلیک میل کر رہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT