Thursday , September 21 2017
Home / دنیا / تھائی لینڈ میں سلسلہ وار بم دھماکوں کے ذمہ داروں کی تلاش

تھائی لینڈ میں سلسلہ وار بم دھماکوں کے ذمہ داروں کی تلاش

بڑے پیمانے پر مہم کا آغاز ‘ مسلم تخریب کاری سے تعلق نہیں۔ سیاحتی تجارت پر منفی اثر کا اندیشہ
ہوا ہن ( تھائی لینڈ ) 13 اگسٹ ( سیاست ڈاٹ کام ) تھائی حکام نے کل ملک کے مختلف مقامات پر ہوئے بم دھماکوں کے سلسلہ میںخاطیوں کی بڑے پیمانے پر تلاش شروع کردی ہے ۔ یہ سارے دھماکے تفریحی اور سیاحتی مقامات پر ہوئے تھے ۔ کل کے دھماکوں کے بعد تاجر برادری ان حملوں کے اہمیت کی حامل سیاحتی صنعت پر ہونے والے مالیاتی اثرات کا جائزہ لینے میں مصروف ہیں۔ تھائی لنیڈ میں پانچ جنوبی صوبوں میں جمعرات کی رات دیر گئے کے بعد تقریبا 11 چھوٹے بم دھماکے ہوئے تھے ۔ یہ دھماکے کل بھی جاری رہے تھے ۔ ان دھماکوں میں چار مقامی افراد ہلاک اور زائد از 30 زخمی ہوگئے تھے جن میں بیرونی سیاح بھی شامل تھے ۔ بیشتر بم دوہرے دھماکوں میں رکھے گئے تھے ۔ یہ دھماکے طویل ہفتہ واری تعطیلات کے دوران سیاحتی مقامات پر ہوئے ۔ یہ دھماکہ ساحل سمندر کے ٹاؤن ہوا ہون میں بھی ہوا تھا جبکہ دوسرا پھوکیٹ آئی لینڈ میں ہوا تھا ۔ ڈپٹی کمشنر پولیس پونساپٹ پونگ چاریون نے کہا کہ ہمیں یقین ہے کہ یہ کارستانی ایک سرغنہ کے نیٹ ورک کی جانب سے کی گئی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ابھی تک ان دھماکوں کے سلسلہ میں کوئی گرفتاری عمل میں نہیں لائی گئی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ابھی تک یہ واضح نہیں ہوسکا ہے کہ ان دھماکوں کا مقصد کیا تھا ۔

انہوں نے کہا کہ یہ دھماکے تھائی لینڈ کے جنوب میں فروغ پانے والی تخریب کاری سے تعلق نہیں رکھتے ۔ تجزیہ نگاروں نے بھی اس خیال سے اتفاق کیا ہے ۔ اگر ان دھماکوں کیلئے مسلم باغیوں کو ذمہ دار قرار دیا جائے تو یہ در اصل علیحدگی پسند مہم میں زبردست توسیع کو ظاہر کرتا ہے ۔ ان دھماکوں میں اکثر و بیشتر بیرونی شہریوں کو نشانہ بنایا جاتا ہے ۔ تھائی لینڈ میں فوجی بغاوت کے ذریعہ قائم ہوئی حکومت کام کر رہی ہے اور وہ داخلی سلامتی و سکیوریٹی پر خاص توجہ کا ادعا کرتی ہے ۔ کل ہوئے دھماکے اس حکومت کیلئے الجھن کا باعث ہوسکتے ہیں۔ ہوا ہن بیچ ریسارٹ سب سے زیادہ متاثر ہوا ہے جہاں 24 گھنٹوں میں چار بم دھماکے ہوئے ہیں اور مقامی افراد کا کہنا ہے کہ ان دھماکوں کی وجہ سے سیاحتی سیزن جو عروج پر ہے وہ متاثر ہوسکتا ہے اور یہاں سیاحتی صنعت پر اس کے منفی اثرات مرتب ہوسکتے ہیں۔ یہاں مقامی افراد کے بموجب ہوا ہن تفریحی ریسارٹ میں ماضی میں اس طرح کے واقعات پیش نہیں آئے تھے ۔ انہیں اندیشہ ہے کہ تفریحی سیزن میں ان دھماکوں کی وجہ سے کاروبار سست روی کا شکار ہوجائیگا ۔

TOPPOPULARRECENT