Thursday , September 21 2017
Home / کھیل کی خبریں / تھائی لینڈ میں ورلڈ کرکٹ لیگ ریجنل کوالیفائرس

تھائی لینڈ میں ورلڈ کرکٹ لیگ ریجنل کوالیفائرس

سعودی عرب کی 390 رنز سے فتح ، چین کی ٹیم 28 رنز پر آؤٹ
کپتان شعیب علی کی دھواں دھار بیٹنگ ، محمد افضل کی سنچری اور شہباز کی نصف سنچری
بنکاک۔ 23 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) تھائی لینڈ میں آج کھیلے گئے ورلڈ کپ لیگ ریجنل کوالیفائر کے ایک میچ میں سعودی عرب نے چین کو محض 28 رنز کے معموملی اسکور پر آؤٹ کردیا۔ اس طرح چینیوں کو سعودی ٹیم کے مقابلے 418 رنز کے بھاری اسکور کے مقابلے 390 رنز سے شکست ہوگئی۔ 50 اوورس کے اس میچ میں چینی ٹیم محض12.4 ویں اوورس میں28 رنز کے مجموعی اسکور پر آؤٹ ہوگئی اور اس کا سب سے زیادہ اسکور 13 رنز ایکسٹراس کی شکل میں بن سکا۔ چین کا یہ مجموعی اسکور اب تک کے کسی بھی بین الاقوامی میچ میں سب سے کم ہے۔ قبل ازیں 2004ء کے دوران سری لنکا کے خلاف کھیلے گئے ایک میچ میں زمبابوے کی ٹیم صرف 35 رنز بناسکی لیکن چین کی ٹیم 7 رنز سعودی عرب کے خلاف 35 سے بھی کم یعنی صرف 28 رنز بناسکے، لیکن 2007ء میں گیانا میں بارباڈوس کے خلاف ویسٹ انڈیز انڈر 19 نے 50 اوورس کے ایک میچ میں صرف 18 رنز بنائی تھی جو اب تک کا کمترین اسکور ہے۔ تھائی لینڈ کے شمالی شہر پیانگ مائی میں کھیلے گئے آج کے میچ میں سعودی عرب کی کامیابی کی توقع کی جارہی تھی اور اس کی یہ کامیابی 2023ء ورلڈ کپ کوالیفائنگ کی سمت پہلا قدیم ہے۔ سعودی عرب کے کپتان نے صرف 24 گیندوں میں 50 رنز بناتے ہوئے اپنی ٹیم کو 400 رنز کے اسکور تک پہونچانے میں کافی مدد کی۔ انہوں نے 6 وکٹوں اور 10 چوکوں کی مدد سے صرف 41 گیندوں میں 91 رنز بنایا۔ سعودی عرب کے شہباز رشید نے 50 رنز بنایا اور محمد افضل نے 91 گیندوں میں 13 چوکوں اور 2 چھکوں کی مدد سے سنچری مکمل کی۔ سعودی عرب کے تین بولروں نے چین کی اننگز کی 28 رنز پر ختم کرنے میں کلیدی رول ادا کیا۔ ابرارالحق نے 8 رنز دے کر 3 وکٹس حاصل کیا۔ لیگ اسپنر عمران عارف نے صرف 2 رنز کے عوض 3 وکٹس حاصل کئے۔ آف اسپنر شہباز رشید کی ہیٹ ٹرک پر کھیل ختم ہوگیا۔ رشید کو چوتھے وکٹ سے محروم رہنا پڑا، کیونکہ 11 ویں کھلاڑی جیانگ شرپاؤ زخمی ہونے کے سبب نہیں کھیل سکے۔ اس بدترین شکست سے قطع نظر چین کے بولر فینگ یو نے شاندار کھیل کا مظاہرہ کرتے ہوئے 10 اوورس میں 89 رنز دے کر 5 وکٹس حاصل کیا۔ اس ٹورنمنٹ میں تھائی لینڈ، بحرین، بھوٹان، کویت، قطر اور دیگر ممالک بھی حصہ لے رہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT