Thursday , September 21 2017
Home / دنیا / تیونیشیا میں ایمرجنسی کا اعلان

تیونیشیا میں ایمرجنسی کا اعلان

TUNIS, NOV 25- Tunisian forensics police inspect a Tunisian presidential guard bus at the scene of a suicide bomb attack in Tunis, Tunisia November 25, 2015. Tunisian security officials said on Wednesday a suicide bomber carried out the attack on a presidential guard bus, killing at least 13 and forcing the government to impose a nationwide state of emergency. REUTERS/UNI PHOTO-15R

تیونس 25 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) صدر تیونیشیا بیجی کائدا سیبی نے صدر کی حفاظت کرنے والے گارڈس کی بس پر کئے گئے بم دھماکہ کے بعد دارالخلافہ میں ایمرجنسی اور کرفیو کا اعلان کردیا ہے۔ بم دھماکے میں 12 افراد کی ہلاکت کی خبر ہے۔ دریں اثناء جائے واردات پر موجود ایک سکیوریٹی ذریعہ نے بتایا کہ بس میں موجود تقریباً گارڈس ہلاک ہوگئے۔ یاد رہے کہ تیونس میں 2011 ء کے انقلاب کے بعد یہ ہمیشہ جہادیوں کے نشانہ پر رہا ہے۔ کل ہوئے بم دھماکے کی البتہ کسی فرد یا تنظیم نے ذمہ داری قبول نہیں کی ہے۔ زخمیوں کی تعداد 20 بتائی گئی ہے۔ بم دھماکہ جس مقام پر ہوا اُس کا نام محمد V ایونیو ہے اور اس وقت وہاں 26 واں کار تھیج فلم فیسٹیول زور و شور سے جاری تھا۔ اسیبسی نے آج اپنا دورۂ سوئٹزرلینڈ منسوخ کردیا اور ملک بھر میں ایمرجنسی کے نفاذ اور دارالخلافہ میں کرفیو کے نفاذ کا اعلان کردیا۔  تیونس بم حملہ میں 10 کیلو دھماکو اشیاء استعمال کی گئی تھی۔ کل کئے گئے اس دھماکہ میں کم از کم 12 افراد ہلاک ہوئے تھے ۔

TOPPOPULARRECENT