Wednesday , October 18 2017
Home / Top Stories / جائیداد ٹیکس میں اضافہ کرنے کی تیاری ، بلدیہ کی آمدنی بڑھانے حکمت عملی

جائیداد ٹیکس میں اضافہ کرنے کی تیاری ، بلدیہ کی آمدنی بڑھانے حکمت عملی

ترقی کے نام عوام پر ٹیکس کا اضافی بوجھ ، حکومت کی سفارش پر عمل کرنے بلدیہ کا منصوبہ
حیدرآباد۔20مارچ (سیاست نیوز) حکومت کو درپیش خسارہ سے نمٹنے کیلئے مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد کی جانب سے جائیداد ٹیکس میں اضافہ کیا جائے گا؟ مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد نے شہر حیدرآباد و سکندرآباد کے علاوہ بلدی حدود میں موجود تمام علاقو ںمیں جائیداد ٹیکس میں اضافہ کی حکمت عملی تیار کرنی شروع کردی ہے اور اس حکمت عملی کے ذریعہ جی ایچ ایم سی نے بلدیہ کی آمدنی میں اضافہ کو ممکن بنانے کی کوشش کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ باوثوق ذرائع سے موصولہ اطلاعات کے مطابق اسمبلی سیشن کے اختتام کے فوری بعد جی ایچ ایم سی کے بجٹ کی منظوری کیلئے بلدیہ کا اجلاس عام منعقد ہوگا اور اس اجلاس سے قبل پراپرٹی ٹیکس میں اضافہ کے متعلق قطعی فیصلہ کیا جائے گا۔ بتایاجاتاہے کہ عہدیداروں نے اس سلسلہ میں مشاورت کا عمل مکمل کرلیا ہے اوربہت جلد اسٹینڈنگ کمیٹی کے اجلاس میں مشاورت و منظوری کے بعد اجلاس عام میں تجویز پیش کرتے ہوئے قبول کروانے کا ذہن تیار کرلیا گیا ہے۔ حکومت تلنگانہ کی جانب سے جی ایچ ایم سی کی آمدنی پر نظریں کوئی نئی بات نہیں ہے کیونکہ جو رقومات وصول کی جا رہی ہیں اور جی ایچ ایم سی حدود سے حکومت کو حاصل ہورہی آمدنی میں جی ایچ ایم سی کا حصہ تو حاصل نہیں ہو رہا ہے لیکن جو رقومات جی ایچ ایم سی کی جانب سے وصول کی جا رہی ہیں ان میں حکومت اپنا حصہ حاصل کرنے میں کوئی کوتاہی نہیں کر رہی ہے بلکہ اپنے حصہ کے حصول میں عجلت کا مظاہرہ کر رہی ہے۔ ریاستی حکومت کی جانب سے جی ایچ ایم سی کو حاصل ہونے والے فنڈس میں کمی کے سبب مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے اور ملازمین ان حالات سے پیدا ہونے والے مسائل سے عہدیداروں کو واقف کروانے کے باوجود اس مسئلہ کے حل کے بجائے پراپرٹی ٹیکس میں اضافہ کے ذریعہ عوام پر مزید بوجھ عائد کرنے کی منصوبہ بندی کی جا رہی ہے اور ترقی کیلئے کئے جانے والے اقدامات کا اسے نام دیا جانے لگا ہے۔ریاستی حکومت کو روانہ کردہ تجاویز میں جائیداد ٹیکس میں اضافہ کے متعلق تجویز بھی روانہ کردی گئی ہے اور کہا جا رہا ہے ان تجاویز کو حکومت کی سفارش پر ہی روانہ کیا گیا ہے ۔ جائیداد ٹیکس میں اضافہ کے متعلق اسٹینڈنگ کمیٹی کی منظوری کے بعد ہی اسے مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد کے جنرل باڈی اجلاس میں منظوری کیلئے پیش کیا جائے گا اور اس اجلاس میں منصوبہ کو منظوری حاصل ہونے کاعہدیداروں اور حکومت کو یقین ہے۔

TOPPOPULARRECENT