Sunday , April 23 2017
Home / ہندوستان / جادھو کی سزا پر تعمیل کو قتل سمجھا جائیگا ‘ ہندوستان

جادھو کی سزا پر تعمیل کو قتل سمجھا جائیگا ‘ ہندوستان

ممبئی 13 اپریل ( سیاست ڈاٹ کام ) اگر پاکستان ‘ کلبھوشن جادھو کے خلاف سزائے موت کی تعمیل کرتا ہے تو اسے ہندوستانی شہری کے قتل سے تعبیر کیا جائیگا ۔ منسٹر آف اسٹیٹ دفاع سبھاش بھامرے نے یہ بات کہی ۔ انہوں نے کہا کہ جادھو کی رہائی کیلئے ہندوستان ‘ پاکستان پر بین الاقوامی سفارتی دباؤ بنانے کی کوشش کر رہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے پاکستان میں حکام کو سخت پیام دیا ہے کہ جس طرح سے فوجی عدالت نے جادھو کے فیصلہ سنایا ہے وہ شفاف نہیں ہے اور نہ ہی باہمی تعلقات کی مطابقت میں ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم مسلسل پاکستان سے کہہ رہے ہیں کہ جادھو کے خلاف ثبوت فراہم کیا جائے جس کے تحت اس کے خلاف پاکستان میں مقدمہ چلایا گیا اور اسے سزائے موت سنائی گئی ۔ ہم اس کی مذمت کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اگر سزائے موت کے فیصلے کی تعمیل کی گئی تو ہم اسے ایک ہندوستانی شہری کا قتل سمجھیں گے اور کسی بھی حال میں اسے برداشت نہیں کرینگے ۔ مسٹر بھامرے نے جادھو کی رہائی کیلئے ہندوستان کی جانب سے کئے جانیوالے اقدامات کی تفصیل بھی بتائی ۔ انہوں نے کہا کہ ہم پاکستان پر ممکنہ حد تک بین الاقوامی سفارتی دباؤ بنا رہے ہیں ۔ ہم نتائج کے تعلق سے پر امید ہیں۔

 

جادھو کے مقام کے بارے میں پتہ نہیں
نئی دہلی ۔ /13 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) ہندوستان کو ریٹائرڈ بحریہ کے عہدیدار کلبھوشن جادھو کے پاکستان میں رہنے کی جگہ یا ان کی حالت کے بارے میں کوئی اطلاع نہیں ہے ۔ وزارت امور خارجہ نے آج کہا کہ وہ حکومت پاکستان سے ربط برقرار رکھے ہوئے ہیں کیونکہ یہ ایک انتہائی اہم مسئلہ ہے ۔ سمجھا جاتا ہے کہ ہندوستان کو سفارتی سطح پر جادھو تک رسائی کیلئے 13 مرتبہ اجازت نہیں دی گئی ۔ اس کے باوجود ہندوستان نے پھر ایک بار اجازت کی خواہش کی ہے ۔ وزارت امور خارجہ کے ترجمان گوپال باگھلے نے کہا کہ ملک بھر میں عوام کے جذبات جادھو کے ساتھ ہیں اور انہیں انصاف کیلئے ہم تمام تر کوششیں جاری رکھیں گے ۔ تاہم انہوں نے اس کی مزید تفصیلات نہیں بتائی ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT