Tuesday , October 17 2017
Home / مضامین / جدہ میں بی جے پی کے ترجمان سید شاہنواز حسین کا انٹرویو

جدہ میں بی جے پی کے ترجمان سید شاہنواز حسین کا انٹرویو

عارف قریشی ۔ جدہ
ہماری حکومت ہندو ہو یا مسلمان یا سکھ ، عیسائی سب مذاہب کا احترام کرتی ہے ۔ ہمارے ملک میں کئی زبانیں بولی جاتی ہیں اور ہم ہر زبان کے بولنے والوں کا احترام کرتے ہیں ۔ ہمارا مقصد ہندوستان کی ترقی ہے اور یہ ترقی قومی یکجہتی کے ذریعہ ہی ہوسکتی ہے ۔ انڈین قونصلٹ جنرل آفس جدہ میں بی جے پی کے ترجمان اور سابق مرکزی وزیر اور چیرمین فار حجاج رہائشی عمارتیں سید شاہنواز حسین نے عارف قریشی کو ایک خصوصی  انٹرویو میں یہ بات بتائی ۔
وزیر موصوف نے مزید کہا کہ انتخابات کے دوران ہمارے وزیراعظم نریندر مودی نے عوام سے جو وعدہ کیا تھا (سب کا ساتھ سب کا وکاس) ہماری حکومت اس نعرہ پر کام کررہی ہے ۔ ہم ہندوستان کے ہر شہری کو اپنے ساتھ لے کر چلنا چاہتے ہیں ۔ ہمارا ملک ہندوستان دنیا میں سب سے بڑا جمہوری ملک ہے ۔ ہمارے ملک میں ہر شہری کو اپنی رائے رکھنے کا حق ہے ۔ ہمارے ملک کے دستور میں جمہوری انداز میں اپنے حقوق حاصل کرنے کا حق بھی ہر شہری کو ہے مگر ایسے احتجاج سے کیا فائدہ جس سے ملک کی گنگا جمنی تہذیب کو نقصان پہنچتا ہو اور ملک کے امن و امان کو خراب کیا جاتا ہو ۔ بعض لوگ ملک کو تقسیم کرنے کی باتیں کرتے ہیں ۔ دراصل وہی لوگ ملک کے دشمن ہیں ۔ انھوں نے مزید کہا کہ ہماری حکومت ملک کے خلاف آواز اٹھانے والوں کو کبھی معاف نہیں کرے گی ۔ انھوں نے کہا کہ دہشت گردی کا تعلق کسی بھی مذہب سے نہیں ہوتا ۔ دہشت گرد کا کوئی مذہب نہیں ہوتا ۔
سابق وزیر سید شاہنواز حسین نے مزید کہا کہ ہمارے وزیراعظم نریندر مودی کا نعرہ ہے (میک ان انڈیا) ہماری حکومت اس نعرہ پر کام کررہی ہے اور اقلیتوں کی ترقی و خوشحالی کے لئے کروڑوں روپے خرچ کررہی ہے۔ ہماری حکومت پہلی حکومت ہے جو اقلیتوں کے درخشاں مستقبل کے لئے کئی اچھے اقدامات کررہی ہے جس سے مستقبل میں اقلیتوں کو کافی فائدے پہنچیں گے ۔ انھوں نے مزید کہا کہ کسانوں کی خوشحالی کے لئے بھی ہماری حکومت جامع منصوبہ رکھتی ہے اور اس پر عمل بھی شروع ہوچکا ہے ۔ سابق وزیر اور ترجمان بی جے پی نے مزید بتایا کہ ہماری حکومت نے پردھان منتری گرام سڑک یوجنا کے تحت دیہی سڑکوں اور پلوں کو مضبوط سے مضبوط بنانے کے لئے جامع منصوبہ بنایا ہے ۔ اب گاؤں میں اور دیہاتوں میں بھی سڑکوں اور پلوں کی تعمیر کی جائے گی اور ریلوے لائن کو جدید طریقے سے آراستہ کیا جائے گا ۔
انھوں نے کہا کہ ہماری حکومت دکھاوے کی بات یا دکھاوے کے بیانات نہیں دیتی بالکل کام کرکے دکھاتی ہے ۔ انھوں نے مزید کہا کہ بہت جلد ہندوستان میں پانچ ریاستوں میں اسمبلی انتخابات ہونے والے ہیں ان ریاستوں میں ہماری پارٹی زبردست کامیابی حاصل کرے گی ۔
این آر آئیز کے بارے میں ایک سوال کے جواب میں بی جے پی کے لیڈر نے کہا کہ ہماری حکومت این آر آئیز کی بہت قدر کرتی ہے ۔ ہر ایک این آر آئی اپنے ملک کا سفیر ہوتا ہے ۔ آپ لوگوں کو اپنے ملک سے محبت ہے اور ہماری حکومت کو آپ لوگوں سے محبت ہے ۔ آپ لوگ اپنے ملک سے باہر رہ کر اپنی خدمات انجام دے رہے ہیں اور اپنے ملک کا نام روشن کررہے ہیں اور اپنے ملک کے خزانہ میں اضافہ کررہے ہیں ۔ اس طرح این آر آئیز اپنے ملک سے دور رہ کر اپنے ملک کے خزانہ میں اضافہ کررہے ہیں ۔ اس طرح این آر آئی اپنے ملک سے دور رہ کر بھی اپنے ملک کی خدمت کررہے ہیں ۔
وزیر موصوف نے مزید کہا کہ ہماری حکومت کی وزیر خارجہ سشما سوراج  این آر آئیز کے مسائل کو حل کرنے کے لئے اپنا اولین فرض سمجھتی ہیں ۔ کسی بھی این آر آئی کو کسی بھی قسم کی تکلیف کی اطلاع جب ہماری وزیر خارجہ سشما سوراج کو ملتی ہے تو ان کی منسٹری فوری حرکت میں آجاتی ہے اور این آر آئی کی تکلیف و پریشانی کو سفارتی سطح پر دور کرنے کے لئے اقدامات کرتی ہے ۔
وزیر موصوف نے زور دے کر کہا کہ تمام این آر آئیز یقین کرلیں کہ یہ سرکار آپ کی سرکار ہے اور آپ کے ساتھ ہے ۔ آپ کی سرکار کبھی بھی آپ کو تنہا نہیں چھوڑے گی ۔ انھوں نے مزید کہا کہ سعودی عرب اور ہندوستان کے تعلقات زمانہ قدیم سے ہیں اور دن بہ دن ان تعلقات میں اضافہ ہوتا جارہا ہے ۔ بہت جلد ہمارے وزیراعظم نریندر مودی سعودی عرب کا دورہ کرنے والے ہیں ۔ اس دورے کے بعد سعودی عرب اور ہندوستان کے درمیان سفارتی ، تجارتی ، تعمیراتی ، تعلیمی ، اطلاعاتی ، ٹکنالوجی اور باہمی تعلقات میں مزید اضافہ ہوگا ۔
حجاج کرام کے رہائش کے سوال کے جواب میں وزیر موصوف نے کہا کہ حج 2016 کے حجاج کرام کے لئے مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ میں رہائشی عمارتوں کی تلاش جاری ہے ۔ ہماری کوشش ہے کہ حجاج کرام کو اچھی سے اچھی رہائشی عمارتیں فراہم کریں اور حجاج کرام کو زیادہ سے زیادہ سے آرام اور سکون فراہم کیا جائے تاکہ حجاج کرام اپنا زیادہ سے زیادہ وقت خدا کی عبادت میں گذاریں ۔
وزیر موصوف نے قونصل جنرل ہند برائے سعودی عرب بی ایس مبارک کی خدمات کی تعریف کی اور کہا کہ انھوں نے حجاج کرام کی خدمت میں کوئی کسر نہیں چھوڑی ۔ حجاج کرام کی خدمت انھوں نے شب و روز کی ہے ۔ وزیر موصوف نے نئے قونصل حج محمد شاہد عالم کے بارے میں کہا کہ وہ ایک محنتی اور باصلاحیت ڈپلومیٹ ہیں ۔ مجھے پوری امید ہے کہ وہ حجاج کرام کے رہائش و طعام اور صحت و تندرستی کے سارے انتظامات بہتر سے بہتر طریقے سے انجام دیں گے ۔

TOPPOPULARRECENT