Thursday , September 21 2017
Home / جرائم و حادثات / جعلی تعلیمی سرٹیفیکٹ کا ریاکٹ بے نقاب ‘5 گرفتار

جعلی تعلیمی سرٹیفیکٹ کا ریاکٹ بے نقاب ‘5 گرفتار

حیدرآباد 14 اگسٹ (سیاست نیوز) جعلی تعلیمی سرٹیفکٹ کے ریاکٹ کو کمشنر ٹاسک فورس نے بے نقاب کرتے ہوئے 5 افراد کو گرفتار کرلیا اور اُن کے قبضہ سے ملک کی مختلف یونیورسٹیز کے جعلی تعلیمی سرٹیفکٹس بھاری مقدار میں برآمد کرلئے۔ ڈپٹی کمشنر پولیس ٹاسک فورس مسٹر بی لمبا ریڈی نے بتایا کہ ٹولی کا سرغنہ 52 سالہ کالج پرنسپل وی لچی ریڈی ہے جو اپنے برادر نسبتی اور دیگر ساتھیوں کی مدد سے بڑے پیمانے جعلی تعلیمی سرٹیفکٹس کا کاروبار چلارہا تھا۔ اُنھوں نے بتایا کہ لچی ریڈی ضلع پرکاشم پامور منڈل میں واقع اومیگا کالج آف ایجوکیشن کا پرنسپل ہے اور اُس نے سابق میں ضلع نلگنڈہ کے مریال گوڑہ علاقہ میں وی ایم آر ووکیشنل انسٹی ٹیوٹ کی آڑ میں 2001 ء میں سینکڑوں نوجوانوں کو جعلی تعلیمی سرٹیفکٹس فراہم کئے تھے۔ ڈی سی پی نے بتایا کہ اِس ٹولی کا ایک اور رکن جی کارتک جو لچی ریڈی کا برادر نسبتی ہے کی مدد سے اترپردیش کے بندیل کھنڈ یونیورسٹی، بنگلور یونیورسٹی، آچاریہ این جی رنگا یونیورسٹی، بی آر امبیڈکر اوپن یونیورسٹی کے علاوہ ایس ایس سی بورڈ ، انٹرمیڈیٹ بورڈ کے جعلی سرٹیفکٹس تیار کرتے ہوئے خواہشمند نوجوانوں کو فی سرٹیفکٹ 20 ہزار روپئے میں فروخت کیا کرتا تھا۔جعلی سرٹیفیکٹ فروخت کرتے ہوئے انہیں گرفتار کیا گیا ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT