Thursday , April 27 2017
Home / ہندوستان / جغرافیہ کی نصابی کتاب میں متنازعہ لفظ پر کانگریس کا احتجاج

جغرافیہ کی نصابی کتاب میں متنازعہ لفظ پر کانگریس کا احتجاج

بھوپال، 22 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) مدھیہ پردیش اسمبلی میں آج اپوزیشن پارٹی کانگریس کے اراکین نے ریاست میں ایم اے جغرافیہ کی نصابی کتاب میں ایک متنازعہ تبصرہ پر زبردست ہنگامہ کیا، جس کی وجہ سے ایوان کی کارروائی دو مرتبہ 10-10 منٹ کے لئے اور پھر دن بھر کے لئے ملتوی کرنی پڑی۔ اس معاملے میں وزیر اعلی شیوراج سنگھ چوہان کے بیان کے مطالبے پر اپوزیشن کے مسلسل ہنگامے کے درمیان ایوان کے ایجنڈے میں شامل تقریبا تمام کام پورے کئے گئے ، جس کے بعد اسمبلی کے اسپیکر ڈاکٹر سیتاسرن شرما نے ایوان کی کارروائی کل صبح 11 بجے تک کیلئے ملتوی کر دی ۔

نیوکلیر پاور جنریشن 2024ء تک تین گنا کیا جائے گا : حکومت
نئی دہلی ، 22 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) نیوکلیائی برقی کی ملک میں پیداوار کی گنجائش 2024ء تک تقریباً 15,000 میگاواٹ ہوجانے کی توقع ہے کیونکہ حکومت نے نئے پلانٹس قائم کرنے کے عمل میں تیزی پیدا کردی ہے، لوک سبھا کو آج یہ اطلاع دی گئی۔ 2014ء میں انڈیا کی نیوکلیر پاور جنریشن کی طاقت 4,780 میگا واٹ تھی۔ مملکتی وزیر برائے پی ایم او جتندر سنگھ نے کہا کہ نریندر مودی حکومت کی جانب سے متعدد اقدامات کئے گئے ہیں کہ تمام جاریہ نیوکلیر پراجکٹوں میں تیزی لائی جائے اور ملک کے مختلف حصوں میں نئے پلانٹس قائم کئے جائیں۔ انھوں نے وقفہ سوالات کے دوران کہا کہ جب ہم 2014ء میں اقتدار پر آئے ہم نے نیوکلیر پاور کی پیداوار کو 10 سال میں تین گنا کرنے کا نشانہ مقرر کیا تھا اور ہمیں اس نشانے تک پہنچنے کی امید ہے۔ تاہم ، وزیر موصوف نے کہا کہ نشانے کے مطابق نیوکلیر پاور پیدا کرنے کیلئے معقول یورانیم دستیاب ہونا پڑے گا، دیسی کے ساتھ ساتھ بیرونی وسائل سے بھی۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT