Sunday , October 22 2017
Home / Top Stories / جماعت اسلامی ہند کی چار روزہ کانفرنس کا آج آغاز

جماعت اسلامی ہند کی چار روزہ کانفرنس کا آج آغاز

ملک کے بدلتے ہوئے منظر نامہ و جماعت کی سرگرمیوں پر غور و خوض کیا جائیگا
حیدرآباد 10 ڈسمبر (سیاست نیوز) جماعت اسلامی ہند کی چار روزہ کانفرنس کا 11 ڈسمبر کو آغاز ہوگا۔ اس کانفرنس کے دوران عالمی و قومی حالات کے علاوہ ملک کے بدلتے ہوئے منظر نامہ پر تبادلہ خیال کیا جائے گا۔ کانفرنس کے دوران جماعت اسلامی کو مستحکم کرنے کے علاوہ جماعت کی سرگرمیوں کو وسعت دینے منصوبہ بندی پر بھی غور کیا جائے گا۔ 12 ڈسمبر کو جلسہ عام منعقد ہوگا جس کا عنوان ’’سماج کی تعمیر نو اور ہم‘‘ رکھا گیا ہے۔ وادیٔ ہدیٰ شاہین نگر میں منعقد ہونے والے اِس فکری اجتماع میں ملک کی مختلف ریاستوں و شہروں سے تعلق رکھنے والے جماعت اسلامی کے کارکن و ذمہ داران شرکت کریں گے۔ جناب حامد محمد خان امیر حلقہ تلنگانہ و آندھراپردیش نے آج پریس کانفرنس کے دوران یہ بات بتائی۔ اس موقع پر انجینئر محمد سلیم، جناب محمد خالد مبشرالظفر، جناب محمد نصرت علی، جناب رشادالدین کے علاوہ دیگر موجود تھے۔ جناب حامد محمد خان نے بتایا کہ اس چار روزہ کانفرنس کے دوران جماعت کی سرگرمیوں کے متعلق ایک قابل دید نمائش کا اہتمام کیا جارہا ہے جس میں جماعت اسلامی کی جانب سے انجام دی گئی سرگرمیوں بالخصوص فلاحی سرگرمیوں کی تصویری نمائش رکھی جائے گی۔ انھوں نے بتایا کہ 12 ڈسمبر کو منعقد ہونے والے خطاب عام میں جماعت کے ذمہ داران کے علاوہ سیاسی و مذہبی رہنماؤں کے خطابات ہوں گے جوکہ موجودہ حالات میں مسلمانوں کو حکمت عملی اختیار کرنے کے متعلق مشورے دیں گے۔ اس 4 روزہ اجلاس کے دوران ملک کو درپیش مسائل بالخصوص عدم تحمل، مہنگائی اور زعفرانی قوتوں سے خطرات پر بھی تبادلہ خیال کیا جائے گا۔ جماعت اسلامی کی جانب سے مودی حکومت پر  متعدد مرتبہ تنقید کی جاچکی ہے اور عدم تحمل کے معاملہ میں وزیراعظم کی جانب سے اختیار کردہ خاموشی پر بھی گہری تشویش کا اظہار کیا جاچکا ہے۔ اس مسئلہ پر اجلاس کے دوران تفصیلی گفتگو کی جائے گی۔ ملک کو درپیش مہنگائی کے مسئلہ سے نمٹنے میں حکومت کی ناکامی پر بھی جماعت اسلامی چار روزہ اجلاس کے دوران غور کرے گی۔ اُنھوں نے بتایا کہ اجلاس کے انعقاد کا مقصد دراصل جماعت اسلامی کی جانب سے اختیار کردہ حکمت عملی اور ملک کے حالات کا جائزہ لیتے ہوئے مستقبل کا لائحہ عمل تیار کرنا ہے۔ انجینئر محمد سلیم نے پریس کانفرنس سے خطاب کے دوران بتایا کہ اجلاس میں عالمی اور قومی مسائل، موجودہ حالات میں خواتین کا کردار، نوجوانوں کے رول کی اہمیت، سرمایہ دارانہ نظام سے پیدا شدہ مسائل، سود خوری و دیگر اُمور پر سیر حاصل گفتگو کرتے ہوئے قطعی قرارداد تیار کی جائے گی جسے عوام کے درمیان پیش کیا جائے گا۔ انھوں نے بتایا کہ جماعت اسلامی کی یہ روایت رہی ہے کہ ہر چار سال میں قومی سطح پر جماعت اسلامی کا اجلاس منعقد کیا جاتا رہا ہے۔

TOPPOPULARRECENT