Thursday , August 24 2017
Home / Top Stories / جمہوریت میں نریندر مودی اور ممتا بنرجی کی آمریت

جمہوریت میں نریندر مودی اور ممتا بنرجی کی آمریت

مغربی بنگال میں کانگریس ۔ کمیونسٹ جماعتوں کی مخلوط حکومت قائم ہوگی، راہول گاندھی کا خطاب
نیامت پور (مغربی بنگال) 2 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) وزیراعظم نریندر مودی کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے نائب صدر کانگریس راہول گاندھی نے آج یہ الزام عائد کیا ہے کہ وہ ملک میں جمہوریت کے قتل کی کوشش میں ہیں اور یہ ادعا کیاکہ چیف منسٹر ممتا بنرجی بھی مغربی بنگال میں ایسا ہی کام کررہی ہیں۔ لیفٹ فرنٹ قائدین کے ساتھ یہاں ایک انتخابی ریالی کو مخاطب کرتے ہوئے کانگریس لیڈر نے کہاکہ نریندر مودی ملک میں جمہوریت کا گلا گھوٹنے کی کوشش کررہے ہیں جنھوں نے انتہائی جابرانہ طریقہ پر اروناچل پردیش اور اتراکھنڈ میں کانگریس حکومتوں کو برطرف کردیا۔ راہول گاندھی نے جوکہ سی پی ایم کے سابق رکن پارلیمنٹ بنگسو گوپال چودھری کے ساتھ شہ نشین پر جلوہ افروز تھے کہاکہ وہ (نریندر مودی) چاہتے ہیں کہ ملک بھر میں ان کے سوا کوئی دوسرا لیڈر نہ ہو۔ یہ الزام عائد کرتے ہوئے نریندر مودی، آر ایس ایس کے نظریات کی تشہیر کررہے ہیں۔ انھوں نے ہندی میں کہاکہ وچار دھارا کی بات کرے تو پورے ہندوستان میں ایک وچاردھارا (نظریہ) ہے۔ یہ سوچ کی بات کرے تو صرف ایک سوچ ہہو۔ ناگپور (آر ایس ایس ہیڈکوارٹر) کی سوچ پورے ہندوستان میں ڈالنا چاہتے ہیں۔ راہول گاندھی نے آج مجوزہ اسمبلی انتخابات کے لئے کانگریس اور سی پی ایم ورکرس کو مخاطب کرتے ہوئے راہول گاندھی نے الزام عائد کیاکہ مغربی بنگال میں ممتا بنرجی جو کام کررہی ہیں وہی کام ملک میں نریندر مودی کررہے ہیں۔

میں نے جب پارلیمنٹ میں ترنمول کانگریس ارکان پارلیمنٹ سے ملاقات کی تھی تو اس وقت یہ شکایت کی تھی کہ وہ صرف ممتا بنرجی کی ہدایت پر ہی کام کرتے ہیں اور خود سے کوئی کام کرنے کی آزادی نہیں ہے۔ کانگریس لیڈر نے کہاکہ ہم مغربی بنگال میں ایسی حکومت تشکیل دینا چاہتے ہیں جہاں پر ہر ایک شہری کی آواز پر توجہ دی جاسکے۔ یہ شبہ ظاہر کرتے ہوئے مغربی بنگال میں ٹی ایم سی اور بی جے پی کے درمیان خفیہ ساز باز پائی جاتی ہے، راہول گاندھی نے کہاکہ مودی حکومت نے ایک اسٹنگ آپریشن کی بنیاد پر اتراکھنڈ حکومت کو گرادیا لیکن ٹی ایم سی لیڈروں کے خلاف اسٹنگ آپریشن منظر عام پر آنے کے بعد بھی چشم پوشی اختیار کرلی۔ مغربی بنگال میں کانگریس اور بائیں بازو کی جماعتوں کے درمیان نشستوں پر مفاہمت کے بعد راہول گاندھی نے یہ توقع ظاہر کی کہ ریاست میں آئندہ مخلوط حکومت قائم ہوجائے گی۔ انھوں نے کہاکہ ترنمول کانگریس کے دور حکومت میں کرپشن انتہا کو پہنچ چکا ہے جس کے باعث کانگریس اور لیفٹ متحد ہونے پر مجبور ہوگئے۔تاکہ ٹی ایم سی کو اقتدار سے بیدخل کیا جاسکے۔اس موقع پر سی پی ایم لیڈر اور سابق وزیر چودھری نے کہاکہ مغربی بنگال میں خوف و دہشت اور ظلم و ستم کا ماحول اور کرپشن کے خاتمہ کے لئے کانگریس اور کمیونسٹ جماعتیں یکجا ہوئی ہیں اور عوام کو بہت جلد ممتا بنرجی کی غلط حکمرانی سے نجات مل جائے گی۔

نکسلائٹس تشدد پر قابو پانے میں کامیابی: وزیر داخلہ
لکھنؤ 2 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) وزیرداخلہ راجناتھ سنگھ نے کہا کہ ملک میں نکسلائٹس تشدد پر قابو پانے میں حکومت کامیاب ہوگئی ہے اور گزشتہ 15 سال کے مقابل اب صورتحال بہتر ہے۔ انھوں نے بتایا کہ فی الحال صورتحال مکمل قابو میں ہے اور ہم نے کامیابی کے ساتھ اس مسئلہ کو نمٹا ہے اور حالات میں مثبت تبدیلی واضح نظر آرہی ہے۔ وزیرداخلہ نے کہاکہ نکسلائٹس تنظیموں سے مذاکرات کیلئے مرکزی حکومت تیار ہے بشرطیکہ وہ تشدد ترک کرتے ہوئے ہتھیار ڈال دیں۔

TOPPOPULARRECENT