Saturday , September 23 2017
Home / کھیل کی خبریں / جنوبی افریقہ پر ہندوستان کو 403 رنز کی سبقت

جنوبی افریقہ پر ہندوستان کو 403 رنز کی سبقت

کوہلی ۔ رہانے کی بہترین ساجھیداری کے آگے مہمان بولرس بے بس

نئی دہلی۔ 5 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) ہندوستانی کرکٹ ٹیم نے جنوبی افریقہ کے خلاف چوتھے اور فائنل میچ کے تیسرے دن آج حریف پر 403 رنز کی بھاری سبقت حاصل کرلی۔ کپتان ویراٹ کوہلی اپنے جارحانہ فام پر واپسی آگئے اور طوفانی بیٹنگ کرتے ہوئے 83 رنز بنایا جس کی مدد سے ان کی ٹیم نے مہمانوں پر اپنا موقف مزید مستحکم بنالیا۔ کوہلی اور اجنکیا رہانے نے پانچویں وکٹ کی ساجھیداری میں 133 رنز بنایا اور دوسری اننگم میں ہندوستان کا اسکور 190 رنز تک پہونچ گیا، تاہم فیروز شاہ کوٹلہ گراؤنڈ پر ناکافی روشنی کے سبب مقررہ وقت سے کچھ دیر قبل ہی کھیل ختم کردیا گیا۔ رہانے نے دوسری اننگز کا کھیل آج وہیں سے شروع کیا جہاں انہوں نے پہلی اننگز میں چھوڑا تھا۔ وہ 52 رنز بناکر ناٹ آؤٹ رہے۔ جنوبی افریقہ کی بے بس ٹیم اس سیریز میں ہندوستان کے ہاتھوں بری طرح پسپا ہوتی رہی ہے۔ اس سیریز میں ہندوستان کو صفر کے مقابلے تین سے سبقت حاصل ہے۔

مہمانوں کو آج بھی کوئی اہم کامیابی حاصل نہیں ہوسکی۔ اگرچہ مرلی وجئے (3)، روہت شرما (0)، شکھر دھون (21)، اور چیٹیشور پجارہ (28) رنز بناتے ہوئے ایک کے بعد دیگر جلد آؤٹ ہوگئے تھے۔ اس کھیل کے مزید دو دن باقی ہیں اور سمجھا جاتا ہے کہ ہندوستان ٹیم اتوار کو لنچ تک کھیلے گی اور اننگز ڈیکلیر کرنے سے قبل 450 رنز کی سبقت حاصل کرنے کی کوشش کی جائے گی۔ کپتان کوہلی نے رواں سیریز میں اپنی پہلی نصف سنچری کی تکمیل کیلئے 154 گیندوں کا سامنا کرتے ہوئے 10 چوکے لگائے۔ یہ ان کی 12 ویں نصف ٹسٹ سنچری ہے اور انہیں اپنے 3,000 ٹسٹ رنز پورے کرنے کیلئے صرف 11 رنز درکار ہیں۔ رہانے نے صبر و تحمل کا مظاہرہ کیا اور 152 گیندوں کا سامنا کرتے ہوئے 5 چوکے لگائے اور انہوں نے 146 گیندوں میں نصف سنچری مکمل کی جبکہ کوہلی صرف 70 گیندوں میں 50 رنز بناچکے تھے۔ کوہلی کی اننگز نے طاقت و مہارت کے امتزاج کی جھلک پیش کی۔ انہوں نے آف اسپنر ڈین پیڈ کی گیند کو کلائی کی طاقت سے گھمادیا لیکن کیل اباٹ کی گیند کا بھرپور مہارت کا سامنا کرتے ہوئے تھرڈ مین ریجن کی طرف گھمادیا جہاں کوئی فیلڈر موجود نہ تھا۔

مورن مورکل کی گیندوں پر بھی انہوں نے کئی مرتبہ مظاہرہ کرتے ہوئے 80 رنز کے انفرادی اسکور پر پہونچے۔ کوہلی آج کی اننگز کے آغاز سے ہی پوری طرح مطمئن اور پُرعزم نظر آرہے تھے کیونکہ وہ اس موقع سے اس لئے بھی فائدہ اٹھانا چاہتے ہیں کہ کم سے کم آئندہ 6 ماہ تک یہ ہندوستان کا آخری ٹسٹ میچ ہوگا۔ کوہلی اور رہانے کی رفاقت میں سنچری بھی بنائی گئی۔ رواں سیریز میں تاحال کسی بھی ٹیم کے کھلاڑیوں کی رفاقت میں سنچری نہیں بنائی گئی تھی ۔ کوہلی کے لئے آج ایک لمحہ دشوار و ناگوار گذارا جب امپائر نے انہیں کیچ آؤٹ قرار دے دیا جب وہ عمران طاہر کی گیند کو کرٹ کرنے کی کوشش کررہے تھے۔ امپائر کی رولنگ کے باوجود کوہلی تقریباً 10 تا 15 سیکنڈس تک شدید برہمی کے ساتھ وہیں کھڑے رہے۔ بعد میں امپائر بروس آکزن فورڈ نے اس گیند کو نو۔ بال قرار دینے کا فیصلہ کیا۔ مورن مورکل جنوبی افریقہ کیلئے بہترین بولر ثابت ہوئے جنہوں نے 17 اوورس میں 29 رنز دے کر 3 وکٹس حاصل کئے۔ ہندوستان نے آج کے کھیل کا بحران کن آغاز کیا اور طویل قد فاسٹ بولر مورن مورکل کی گیند پر مرلی وجئے صرف 3 رنز پر آؤٹ ہوگئے۔

TOPPOPULARRECENT