Sunday , July 23 2017
Home / ہندوستان / جنوبی اور وسطی ہندوستان میں معمول سے کم بارش کے منفی اثرات

جنوبی اور وسطی ہندوستان میں معمول سے کم بارش کے منفی اثرات

نئی دہلی 11 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) محکمہ موسمیات نے کہا ہے کہ رواں مانسون کے دوران وسطی ہند اور جزیرہ نما جنوب میں گزشتہ ایک ہفتہ سے بارش تھم گئی ہے جس کے نتیجہ میں اِن علاقوں میں معمول کی حد کے بہ نسبت منفی رجحانات دیکھے گئے ہیں۔ موسم برسات میں بالعموم اِس مدت تک ہونے والی بارش سے تقریباً 8 فیصد کم بارش ریکارڈ کی گئی ہے۔ علاوہ ازیں ملک بھر میں ہونے والی مجموعی بارش بھی ایک فیصد کم رہی۔ مشرق اور شمالی مشرقی علاقے میں 5 فیصد کم بارش ریکارڈ کی گئی۔ کیرالا، جنوبی کرناٹک، ودربھا اور جزائر انڈومان نکوبار میں بھی معمول سے کم بارش ہوئی ہے۔ تاہم شمال مغربی ہند میں جو دہلی، پنجاب، ہریانہ، راجستھان، جموں و کشمیر، اترپردیش، ہماچل پردیش اور اتراکھنڈ پر مشتمل ہیں، معمول کی حد سے تقریباً 29 فیصد زائد بارش ریکارڈ کی گئی ہے۔ اِس علاقے میں گزشتہ تین سال سے کم بارش ریکارڈ کی جاتی رہی تھی۔ بالخصوص راجستھان، جموں و کشمیر، پنجاب، ہریانہ اور دہلی میں معمول سے بہت زیادہ بارش ہوئی ہے۔ ایڈیشنل ڈائرکٹر جنرل محکمہ موسمیات ایم مہاپترا نے کہا کہ آئندہ ہفتے میں اچھی بارش متوقع ہے۔ اترپردیش اور بہار میں ہوا کے دباؤ میں کمی کے سبب دونوں ریاستوں میں موسلا دھار بارش ہوسکتی ہے۔ اُنھوں نے کہاکہ جزیرہ نما جنوب میں آئندہ دو تین دن کے دوران بارش میں اضافہ کا امکان ہے کیوں کہ خلیج بنگال میں تین دن کے بعد طوفان بھنور کی شکل اختیار کرسکتا ہے۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT