Wednesday , August 23 2017
Home / شہر کی خبریں / جنوری سے ائمہ و موذنین کو ماہانہ ہزار روپئے حکومت سے اعزازیہ

جنوری سے ائمہ و موذنین کو ماہانہ ہزار روپئے حکومت سے اعزازیہ

اوورسیز اسکالر شپس کیلئے مزید امیدواروں کی شمولیت ، سید عمر جلیل سکریٹری اقلیتی بہبود
حیدرآباد۔/5نومبر، ( سیاست نیوز) محکمہ اقلیتی بہبود نے اوورسیز اسکالر شپ اسکیم کے تحت مزید اہل امیدواروں کو اسکالر شپ جاری کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور اس سلسلہ میں قطعی فہرست کی تیاری کا کام جاری ہے۔ سکریٹری اقلیتی بہبود سید عمر جلیل نے بتایا کہ بیرون ملک یونیورسٹیز میں اعلیٰ تعلیم کیلئے 10لاکھ روپئے اسکالر شپ پر مبنی اس اسکیم کیلئے جملہ 510اقلیتی طلباء نے درخواستیں داخل کی تھیں اور پہلے مرحلہ میں 210 امیدواروں کو مستحق قرار دیا گیا۔ محکمہ اقلیتی بہبود نے مابقی طلباء کو ضروری دستاویزات کی پیشکشی کیلئے مہلت دی تھی اور بتایا جاتا ہے کہ مزید کئی امیدواروں نے درکار دستاویزات داخل کئے اس طرح وہ اسکالر شپ کے اہل قرار پائے ہیں۔ سکریٹری اقلیتی بہبود نے عہدیداروں کو ہدایت دی کہ وہ ایسے نئے امیدواروں کے نام بھی منتخب امیدواروں کی فہرست میں شامل کرلیں جنہوں نے ضروری شرائط کی تکمیل کردی ہے۔ اس طرح توقع ہے کہ جاریہ سال تقریباً 240 طلباء اس اسکیم سے استفادہ کرپائیں گے۔ حکومت نے اس اسکیم کیلئے جی آر ای اور جی میٹ امتحانات میں کامیابی کو لازمی قرار دیا تھا۔ سید عمر جلیل نے بتایا کہ حکومت نے اسکیم کیلئے بجٹ میں مختص کی گئی 25کروڑ کی رقم سے 12کروڑ 50لاکھ روپئے جاری کردیئے ہیں اور محکمہ اس بات کی کوشش کررہا ہے کہ تمام اہل امیدواروں کو 10نومبر تک اسکالر شپ کی پہلی قسط اکاؤنٹ میں منتقل کردی جائے۔ انہوں نے بتایا کہ تمام ڈسٹرکٹ میناریٹی ویلفیر آفیسرس سے منتخب امیدواروں کی تفصیلات اور ان کے اکاؤنٹ نمبرس کے بارے میں رپورٹ طلب کی گئی ہے۔ سید عمر جلیل نے بتایا کہ ایسے امیدوار جنہوں نے ایڈمیشن کارڈ، ایر لائنس کا بورڈنگ کارڈ اور داخل کردہ صداقتناموں کی اصلیت کے بارے میں حلف نامہ داخل کیا ہو انہیں پہلی قسط 5 لاکھ روپئے کے طور پر جاری کی جائے گی۔ انہوں نے وضاحت کی کہ صداقتناموں کی اصلیت کے بارے میں حلف نامہ داخل کرنا کوئی نئی شرط نہیں ہے بلکہ دیگر طبقات کیلئے جو شرائط مقرر کی گئیں وہی اقلیتی طلباء کیلئے بھی نافذ کی جارہی ہیں۔ سکریٹری اقلیتی بہبود کے مطابق ایک سال کے تعلیمی نتیجہ کو دیکھتے ہوئے دوسرے سال اسکالر شپ کی دوسری قسط جاری کی جائے گی۔ آئندہ سال اس اسکیم کیلئے جنوری میں درخواستیں طلب کی جائیں گی۔ انہوں نے بتایا کہ حکومت ائمہ اور مؤذنین کو ماہانہ اعزازیہ کے طور پر ایک ہزار روپئے ادا کرنے کا منصوبہ رکھتی ہے جس کیلئے 12کروڑ روپئے محکمہ اقلیتی بہبود کے پاس محفوظ ہیں۔ ائمہ اور موذنین کو اعزازیہ کی ادائیگی کے طریقہ کار کو طئے کرنے کیلئے رہنمایانہ خطوط تیار کئے گئے اور علماء سے اس کی منظوری حاصل کرنے کے بعد اندرون دس یوم اعلامیہ جاری کردیا جائے گا۔ ائمہ اور مؤذنین کو درخواستیں داخل کرنے کیلئے ایک ماہ کا وقت دیا جائے گا۔ انہوں نے امید ظاہر کی کہ آئندہ سال جنوری سے ائمہ و مؤذنین کیلئے کیلئے اعزازیہ کی اجرائی کا آغاز ہوجائیگا۔

TOPPOPULARRECENT