Sunday , September 24 2017
Home / Top Stories / جوکویچ، ازارنکا کی انڈین ویلز میں آسان خطابی فتوحات

جوکویچ، ازارنکا کی انڈین ویلز میں آسان خطابی فتوحات

سربیائی اسٹار نے میلوس راونچ کو ہرایا، ازارنکا نے سرینا ولیمز کو شکست دی
انڈین ویلز ، 21 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) نواک جوکویچ نے میلوس راونچ کو بہت آسانی سے 6-2، 6-0 سے ہرا کر بی این پی پریہاس اوپن ریکارڈ پانچویں مرتبہ جیت لیا، جبکہ اس سال اُن کی کارکردگی 22-1 تک بہتر ہوگئی ہے۔ یہ کیلی فورنیا کے صحرا میں سرب اسٹار کا تیسرا لگاتار ٹائٹل ہے، جو چار مرتبہ کے چمپئن روجر فیڈرر کے ساتھ مساوی کارنامہ ہے، جو گزشتہ دو سال جوکویچ کے مقابل فائنل میں ہارے اور اس مرتبہ گھٹنے کی انجری کی وجہ سے ایونٹ میں حصہ نہیں لئے ہیں۔ ویمنس فائنل بھی مساوی طور پر یکطرفہ ثابت ہوا۔ وکٹوریا ازارنکا نے وقفے وقفے سے غلطی کرنے والی سرینا ولیمز کو 6-4، 6-4 سے شکست دی، جس کے ساتھ ازارنکا اگسٹ 2014ء کے بعد سے پہلی مرتبہ دنیا کے ٹاپ 10 میں شامل ہوگئی ہیں۔ جوکویچ کو ایک گھنٹہ اور 17 منٹ درکار ہوئے کہ انھوں نے راونچ کو چلتا کردیا، جن کی بڑی سرویس پانچ مرتبہ بریک ہوئی۔ کناڈا کے 25 سالہ کھلاڑی نے محض چار ایسیس مارے اور 27 بار ازخود غلطیاں کئے۔ اُن کی پہلی سرویس اوسطاً 128mph رہی جو جوکویچ کے 111mph سے کافی تیز ہے لیکن وہ صرف 55 فیصد موقعوں پر اپنی سرویس کو ٹھیک نشانے پر رکھ پائے۔ سرب اسٹار اپنی پہلی سرویس کے معاملے میں 68 فیصد کامیاب ہوئے اور کبھی انھیں بریک نہیں کیا گیا۔ ویمنس فائنل میں کراؤڈ کی واضح پسندیدہ سرینا نے معمول کے موسم کے برخلاف 91 ڈگری (32C) کے درجہ حرارت والے دن اپنے پرستاروں کو خوشی کا بہت کم موقع فراہم کیا جیسا کہ انھوں نے 33 بار ازخود غلطیاں کئے۔ سکنڈ سٹ میں 3-0 سے پچھڑنے کے بعد سرینا نے اپنی نشست پر واپسی میں اپنا ریاکٹ پٹخ دیا۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT