Wednesday , October 18 2017
Home / اضلاع کی خبریں / جگاریڈی کی بھوک ہڑتال کو پولیس نے ناکام بنادیا

جگاریڈی کی بھوک ہڑتال کو پولیس نے ناکام بنادیا

ملنا ساگر کے متاثرین کو انصاف دلوانے تک جدوجہد جاری رہے گی: کانگریس

سنگاریڈی۔/10اگسٹ،( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) سابق رکن اسمبلی سنگاریڈی ٹی جئے پرکاش ریڈی کی جانب سے ملنا ساگر آبپاشی پراجکٹ کے متاثرہ کسانوں کو انصاف دلانے کی غرض سے آج سنگاریڈی میں غیر معینہ بھوک ہڑتال کو پولیس نے ناکام بناتے ہوئے جئے پرکاش ریڈی کو صبح 10:30 بجے گرفتار کرلیا۔ قبل ازیں ٹی جئے پرکاش ریڈی نے غیر معینہ مدت کی بھوک ہڑتال کے سلسلہ میں پولیس سے اجازت کی درخواست کی تھی۔ پولیس نے ایکٹ 30 کے نفاذ کے پیش نظر اجازت دینے سے انکار کردیا تھا اس کے باوجود جئے پرکاش ریڈی نے آج بھوک ہڑتال کے اپنے فیصلے پر اٹل رہتے ہوئے اپنے مکان سے کانگریس پارٹی کارکنوں اور اپنے حامیوں کے ہمراہ ریالی کی شکل میں آئی بی گیسٹ ہاوز پہنچنے کی کوشش کی۔ پولیس نے راستے میں سرکاری دواخانہ کے قریب انہیں اپنے حامیوں کے ہمراہ گرفتار کرکے اندرا کرن پولیس اسٹیشن منتقل کردیا۔ ٹی جئے پرکاش سابق رکن اسمبلی کی گرفتاری کی اطلاع پاتے ہی صدر ٹی پی سی سی اتم کمار ریڈی، سابق نائب وزیر اعلیٰ دامودر راج نرسمہا، عظمیٰ شاکر جنرل سکریٹری ٹی پی سی سی و انچارج کانگریس ضلع میدک، خواجہ فخر الدین ریاستی صدر اقلیتی سل اور شنکر یادو کارپوریٹر پٹن چیر اندرا کرن پولیس اسٹیشن پہنچ کر ان سے اظہار یگانگت کیا۔ بعد ازاں صدر تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی اتم کمار ریڈی نے ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے ٹی جئے پرکاش ریڈی کی گرفتاری کی سخت مذمت کی اور کہا کہ ہمارے جمہوری ملک میں ہر شہری کو پرامن طور پر احتجاج کا حق حاصل ہے جبکہ ریاستی حکومت اپنے اقتدار کا ناجائز فائدہ اٹھاتے ہوئے جمہوریت کا قتل کررہی ہے۔ کانگریس پارٹی نے کبھی بھی آبپاشی پراجکٹوں کی مخالفت نہیں کی بلکہ ریاستی حکومت کے غلط طریقہ کار کی سخت مخالفت کررہی ہے۔ حکومت پراجکٹوں کے نام پر کنٹراکٹر وں کو فائدہ اور کسانوں کو نقصان پہنچانے کی کوشش کررہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس قائدین حکومت کی ہراسانیوں سے گھبرانے والے نہیں ہیں، ملنا ساگر کے متاثرہ کسانوں کو انصاف دلوانے تک اپنی جدوجہد جاری رکھیں گے۔ انہوں نے ریاستی حکومت سے مطالبہ کیا کہ بی جی او 123 کے بجائے 2013 پارلیمانی ایکٹ کے تحت اس مقام پر گرام سبھا منعقد کرتے ہوئے کسانوں کی تائید سے حصول اراضی کو یقینی بنائیں۔ سابق نائب وزیر اعلیٰ دامودر راج نرسمہا نے کہا کہ ملنا ساگر کے متاثرہ کسانوں کو 2013 پارلیمانی ایکٹ کے معاوضہ اداکرنے کا مطالبہ کیا بصورت دیگر کانگریس پارٹی اپنے احتجاج میں مزید شدت پیدا کرے گی۔ انہوں نے سابق رکن اسمبلی جئے پرکاش ریڈی کو پولیس کی جانب سے گرفتاری کی سخت مذمت کی اور اس کو غیر جمہوری عمل قرار دیا ۔ اس موقع پر اننت کشن، شنکر ریڈی، شیخ صابر صدر ضلع اقلیتی سل، معراج خان ہاشمی، عماد الدین، محمد اظہر الدین، سنتوش رکن بلدیہ، کے این ریڈی صدر ضلع یوتھ کانگریس، مہیش، کرن، سریکانت، ریاستی سکریٹری این ایس یو آئی۔ سدیپ، ارجن لال، سندیپ، رمیش و دیگر کانگریس قائدین و کارکنوں کی کثیر تعداد موجود تھی۔

TOPPOPULARRECENT