Thursday , May 25 2017
Home / Top Stories / جیہ للیتا کے قلب پر حملہ

جیہ للیتا کے قلب پر حملہ

ماہر ڈاکٹروں کی نگرانی میں علاج جاری ‘حالت بتدریج نازک
چینائی ۔ 4ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) چیف منسٹر تاملناڈو جیہ للیتا کے قلب پر آج شدید حملہ ہوا جن کا علاج کرنے والے ماہر ڈاکٹروں کی ٹیم نے بتایا کہ جیہ للیتا کی حالت بتدریج نازک ہے ۔ 22 ستمبر سے دواخانہ میں زیر علاج جیہ للیتا کے قلب پر شدید حملہ ہوا اور اپالو ہاسپٹل میں علاج جاری ہے ۔ ماہر امراض قلب اور ماہر امراض سینہ نے ان کا معائنہ کیا ہے اپالو ہاسپٹل کے چیف آپریٹنگ آفیسر ڈاکٹر سبیا وشوناتھن نے کہا کہ 68 سالہ چیف منسٹر جیہ للیتا کے قلب پر آج شام حملہ ہوا ‘ اس سے تھوڑی دیر قبل ہی انا ڈی یم کے نے اعلان کیا تھا کہ جیہ للیتا صحتیاب ہو کر گھر واپس ہوں گی کیونکہ ایمس کے ڈاکٹروں کے ٹیم نے ان کے مکمل صحتیابی کی توثیق کی تھی ۔ تقریبا دو ماہ تک دواخانے میں زیر علاج رہنے کے بعد انہیں ڈسچارج کیا جانے والا تھا ۔ اپالو ہاسپٹل کی جانب سے شام جاری کردہ فوری بیان کے بعد وزیر داخلہ راجناتھ سنگھ نے گورنر تاملناڈو ودیا ساگر راو سے بات کی اور جیہ للیتا کی صحت کے بارے میں معلومات حاصل کی ۔ گورنر مہاراشٹرا کے حیثیت سے خدمت انجام دینے والے ودیا ساگر کو تاملناڈو کو زائد چارج دیا گیا ہے ۔ انہوں نے ممبئی سے چینائی پہنچ کر دواخانہ میں جیہ للیتا کے صحت کے بارے میں معلومات حاصل کیں ۔ اپنی لیڈر کی حالت بگڑنے کی اطلاع سن کر کئی حامی اپالو دواخانہ کے باہر جمع ہو کر آہ و بکا کرنے لگے اور بعض نے پرتشدد احتجاج کیا ۔ صدر جمہوریہ پرنب مکرجی نے جیہ للیتا کی جلد صحتیابی کے لئے نیک تمناوں کا اظہار کیا ۔ ڈی ایم کے لیڈر کروناندھی نے بھی اپنی نیک تمناکا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ چیف منسٹر تاملناڈو کے حق میں وہ دعا گو ہی

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT