Monday , September 25 2017
Home / شہر کی خبریں / جی او 123 پر ہائی کورٹ بنچ کے حکم التواء کا خیر مقدم

جی او 123 پر ہائی کورٹ بنچ کے حکم التواء کا خیر مقدم

اپوزیشن ترقیاتی کاموں میں رکاوٹ سے باز آجائے ، ہریش راؤ کی پریس کانفرنس
حیدرآباد ۔ 9 ۔ اگست : ( این ایس ایس) : ریاستی وزیر آبپاشی ٹی ہریش راؤ نے ہائی کورٹ کی جانب سے جی او 123 کو مسترد کرنے کے سابقہ احکامات پر حکم التواء جاری کرنے کا خیر مقدم کیا ہے ۔ یہاں سکریٹریٹ میں میڈیا نمائندوں سے بات کرتے ہوئے ہریش راؤ نے سابقہ ہائی کورٹ احکامات پر ڈیویژن بنچ نے حکم التواء جاری کیا ۔ ہریش راؤ نے وعدہ کیا کہ متاثرہ کسانوں بے گھر افراد کو زائد فوائد مہیا کئے جائیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ ریاستی حکومت نے عدالت سے اس بات کا وعدہ کیا ہے کہ وہ ملنا ساگر پراجکٹ کے تحت آنے والے متاثرین کو بہتر معاوضہ فراہم کیا جائے گا ۔ ریاستی وزیر آبپاشی نے جی او کے مسئلہ پر ریاستی چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ کے خلاف مبینہ ریمارکس کے خلاف اپوزیشن کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا ۔ انہوں نے کہا اپوزیشن ٹی آر ایس کے مستقبل سے خوف زدہ ہے ۔ اور چیف منسٹر کے خلاف توہین آمیز مہم میں مصروف ہے ۔ ریاستی وزیر آبپاشی ٹی ہریش راؤ نے اس بات کا دعویٰ کیا کہ ریاستی حکومت ملنا ساگر پراجکٹ کے متاثرین کو جی او 123 کے ذریعہ سال 2013 اراضی حصول ایکٹ سے بھی زیادہ فوائد فراہم کرنے کی پابند ہے ۔ ہریش راؤ نے مزید کہا کہ ریاستی حکومت نے جی او 123 کے ذریعہ فوائد کے متعلق عدالت میں ایک حلف نامہ داخل کرچکی ہے ۔ ریاستی وزیر آبپاشی نے کہا ریاستی حکومت جہاں ضرورت پیش آئے قواعد کے مطابق اراضیات کو حاصل کرے گی ۔ انہوں نے اپوزیشن جماعتوں کو تجویز پیش کرتے ہوئے کہا کہ وہ ترقیاتی کاموں میں رکاوٹ پیدا کرنے کی کوششوں سے باز آجائیں ۔ انہوں نے مزید کہا کہ اپوزیشن قائدین کو ریاست کی ترقی ہضم نہیں ہو پارہی ہے ۔ اور ایسے میں وہ بوکھلاہٹ کا شکار ہوچکے ہیں ۔۔

TOPPOPULARRECENT