Thursday , August 17 2017
Home / Top Stories / جی ایچ ایم سی انتخابات کیلئے 2 فروری کو رائے دہی ،انتخابی شیڈول جاری

جی ایچ ایم سی انتخابات کیلئے 2 فروری کو رائے دہی ،انتخابی شیڈول جاری

حیدرآباد 8 جنوری (سیاست نیوز) جی ایچ ایم سی انتخابات کے لئے رائے دہی 2 فروری 2016 ء کو منعقد ہوگی۔ ریاستی الیکشن کمیشن کی جانب سے الیکشن کمشنر مسٹر وی ناگی ریڈی نے آج پریس کانفرنس کے دوران ضابطہ اخلاق کے نفاذ کا اعلان کرتے ہوئے انتخابی شیڈول جاری کردیا۔ 12 جنوری کو الیکشن کمیشن کی جانب سے اعلامیہ جاری کرتے ہوئے پرچہ نامزدگی کے ادخال کا آغاز ہوگا۔ 12 تا 17 جنوری بجز عام تعطیلات امیدوار اپنے پرچہ نامزدگی 11 بجے تا 3 بجے کے درمیان داخل کرسکتے ہیں۔ 14 اور 15 جنوری کو عام تعطیلات کے سبب پرچہ نامزدگی داخل نہیں کی جاسکیں گی۔ پرچہ نامزدگی کے ادخال کی آخری تاریخ 17 جنوری سہ پہر 3 بجے تک ہوگی۔ پرچہ نامزدگیوں کی تنقیح 18 جنوری کو 11 بجے دن سے شروع ہوگی۔ پرچہ نامزدگی سے دستبرداری کی آخری تاریخ 21 جنوری کو 3 بجے تک رہے گی۔ 21 جنوری کو 3 بجے کے بعد الیکشن کمیشن کی جانب سے قطعی امیدواروں کی فہرست جاری کردی جائے گی۔ مسٹر وی ناگی ریڈی نے پریس کانفرنس کے دوران بتایا کہ جی ایچ ایم سی انتخابات کے لئے 2 فروری کو صبح 7 بجے تا شام 5 بجے رائے دہی منعقد ہوگی اور تلبیس شخصی کو روکنے کے علاوہ پرامن رائے دہی کے لئے حساس مراکز رائے دہی پر ویڈیو گرافی اور ویب کیمرے کے ذریعہ راست نشریات کا انتظام کیا جائے گا۔ اُنھوں نے مزید بتایا کہ اگر کسی مقام پر دوبارہ رائے دہی کی ضرورت پڑنے پر 4 فروری کو رائے دہی کا انعقاد عمل میں آئے گا۔ 5 فروری کو ووٹوں کی گنتی کا عمل صبح 8 بجے شروع ہوگا۔ جی ایچ ایم سی میئر کے لئے کارپوریٹرس کے انتخاب کے عمل کی تکمیل کے بعد اندرون تین یوم اعلامیہ جاری کیا جائے گا۔ مسٹر وی ناگی ریڈی نے بتایا کہ گزشتہ جی ایچ ایم سی انتخابات میں 43 فیصد رائے دہی ریکارڈ کی گئی تھی۔ اس مرتبہ رائے دہی کے فیصد میں اضافہ کے لئے ممکنہ کوشش کی جارہی ہے۔ اُنھوں نے مزید بتایا کہ انتخابی ضابطہ اخلاق کے نفاذ کے لئے الیکشن اتھاریٹی کو احکامات جاری کئے جاچکے ہیں۔ انھوں نے کہاکہ جی ایچ ایم سی انتخابات میں خدمات کی انجام دہی کے لئے 23,271 عملہ کو ذمہ داریاں تفویض کی گئی ہیں۔ ان کے علاوہ پریسائیڈنگ آفیسرس اور اسسٹنٹ پریسائیڈنگ آفیسرس کو ذمہ داریاں حوالہ کی جاچکی ہیں۔ جی ایچ ایم سی حدود میں 7,757 مراکز رائے دہی قائم کئے جائیں گے جہاں رائے دہندوں کو تمام بنیادی سہولتوں کی فراہمی کو یقینی بنانے کی ہدایت دی گئی ہے۔ مسٹر وی ناگی ریڈی نے بتایا کہ شہر میں لگائے گئے ہورڈنگس اور پوسٹرس کے لئے اجازت کا حصول لازمی ہے۔ غیر مجاز ہورڈنگس اور پوسٹرس کے علاوہ تشہیری مواد کو ہٹانے کے احکامات جاری کئے جاچکے ہیں۔ انھوں نے بتایا کہ جی ایچ ایم سی انتخابات کو صاف و شفاف اور غیر جانبدارانہ طور پر منعقد کرنے کے تمام تر اقدامات کئے جارہے ہیں۔ محفوظ زمروں کی نشستوں کی تقسیم سے واقف کرواتے ہوئے اُنھوں نے بتایا کہ حکومت کی جانب سے جاری کردہ احکامات کے مطابق 150 بلدی حلقوں میں 44 بلدی حلقے عام زمرے میں رکھے گئے ہیں جبکہ 44 بلدی نشستیں عام زمرہ کی خواتین کے لئے محفوظ کی گئی ہیں۔ اسی طرح 50 نشستیں بی سی طبقہ کے لئے محفوظ کی گئی ہیں جن میں 25 بی سی خواتین اور 25 بی سی عام زمرہ میں شامل رہیں گی۔ ایس سی طبقہ کے لئے محفوظ کردہ 10 نشستوں میں 5 نشستیں خواتین کے لئے محفوظ رہیں گی اور 5 نشستیں ایس سی زمرہ میں عام رہیں گی۔ اسی طرح ایس ٹی طبقہ کے لئے محفوظ کردہ دو نشستوں میں ایک نشست خواتین کے لئے محفوظ رہے گی۔ ڈاکٹر بی جناردھن ریڈی کمشنر مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد نے بتایا کہ انتخابی عملہ کی تربیت کا آغاز کیا جاچکا ہے اور انتخابی اتھاریٹی بلدی انتخابات کے انعقاد کے لئے پوری طرح سے تیار ہے۔

TOPPOPULARRECENT