Sunday , August 20 2017
Home / شہر کی خبریں / جی ایچ ایم سی کی جانب سے ٹریڈ لائسنس تخمینوں کا سروے، 15روزہ مہم

جی ایچ ایم سی کی جانب سے ٹریڈ لائسنس تخمینوں کا سروے، 15روزہ مہم

غلط تفصیلات کی فراہمی اور توثیق کے ذمہ دار افسران کے خلاف کارروائی کا انتباہ
حیدرآباد۔ /15ستمبر، ( سیاست نیوز) گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن ( جی ایچ ایم سی ) رواں ماہ کے اواخر تک تجارتی لائسنس کے تخمینہ کے کام کو 100فیصد تکمیل کو یقینی بنانے کیلئے آئندہ 15دن کے دوران ’’ سونامی ماڈل ٹریڈ سروے ‘‘ شروع کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ ان حقائق کے انکشاف کے بعد جی ایچ ایم سی حدود میں ٹریڈ لائیسنسوں کے تخمینہ کے کام میں بعض نقائص پائے گئے ہیں۔ کمشنر بی جناردھن ریڈی نے  نقائص سے پاک تخمینہ کو یقینی بنانے کیلئے سخت ہدایت دی ہے۔ اس ضمن میں منگل کو انہوں نے متعلقہ عہدیداروں کے ساتھ ٹیلی کانفرنس بھی کی اور زیر تخمینہ ٹریڈ لائیسنسوں پر توجہ مرکوز کریں۔ اس بات کو یقینی بنایا جائے کہ غلط تفصیلات کی پیشکشی کی توثیق اور اس کی بنیاد پر غلط زمرہ کی فراہمی کے واقعات کا پتہ چلایا جائے۔ علاوہ ازیں ٹریڈ ، فلور ایریا اور ٹیکس کی رقم کے ضمن میں پائی جانے والی خامیوں کا انسداد کیا جائے۔ نیز محصول جائیداد میں بہ شرط ضرورت ،ضروری اطلاع کی جائے۔ جی ایچ ایم سی کے تمام پانچ زونل کمشنرس کو فیلڈ اور آئی ٹی مسائل کی نشاندہی کیلئے کم سے کم 100 کیسس کی تنقیح کی جائے۔ کمشنر جی ایچ ایم سی کی ہدایات کے مطابق اختتام ستمبر کے ساتھ ہی اس تنقیح کیلئے ویجلنس ٹیمس تعینات کردی جائیں گی، تنقیح میں غلطی اور بے قاعدگی کی نشاندہی کی صورت میں خاطی عہدیداروں کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔ لائیسنس فیس داخل کرنے والے تاجرین کو فائدہ ہوگا کیونکہ’ مدرا ‘ قرض حاصل کرنے کیلئے فیس کی ادائیگی بنیادی شرط ہے۔ چیک باؤنس کے مرتکب افراد کے خلاف فوجداری مقدمات درج کرنے پر بھی زور دیا گیا۔ غیر مجاز رقومات کی روک تھام کیلئے مقامی ملازمین پولیس کے بشمول ایک ہمہ محکمہ جاتی فورس تشکیل دینے کا فیصلہ کیا گیا جو فی الفور مداخلت کرتے ہوئے غیر مجاز تعمیرات کو روکنے کی کوشش کرے گی اور اگر ضروری ہو تو غیر مجاز تعمیر کردہ عمارت منہدم کی جائے گی۔

TOPPOPULARRECENT