Thursday , September 21 2017
Home / Top Stories / حجاب میرے کھیل میں کبھی رکاوٹ نہیں ہوا: الغیاشی

حجاب میرے کھیل میں کبھی رکاوٹ نہیں ہوا: الغیاشی

ریوڈی جنیرو۔8 اگست(سیاست ڈاٹ کام)  مغربی ممالک میں حجاب کے خلاف جتنی سازشیں کی جارہی ہیں اتنا ہی حجاب میں رہنے والی شخصیتیں اسے کسی بھی شعبہ میں رکاوٹ قرار نہ دینے کی کامیاب کوشش کررہی ہیں۔ ایسا ہی منظر ریو اولمپکس میں بھی دیکھنے کو مل رہا ہے جہاں مصر کی بیچ والی بال ٹیم کی کھلاڑی دعا الغیاشی توجہ کا مرکز بنی ہوئی ہیں۔ الغیاشی نے اپنے اولمپکس کیریئر کا آغاز کیا ہے لیکن ان کی ٹیم کو جرمنی کے خلاف 21-12, 21-15 کی شکست ہوئی ہے۔ اس مقابلہ کے بعد الغیاشی جو کہ اپنے سر کے علاوہ طویل آستینوں کے ذریعہ اپنے ہاتھوں اور پیروں کو مکمل ڈھانکا ہوا رکھا، کہا کہ وہ گزشتہ 10 برسوں سے حجاب استعمال کررہی ہیں اور اس حجاب نے کبھی بھی بیچ والی بال میں رکاوٹ نہیں کھڑی کی۔ مصر پہلی مرتبہ بیچ والی بال ٹورنمنٹ کے لئے اولمپکس میں رسائی حاصل کرپایا ہے کیوں کہ اس سے قبل مصر کی مردوں اور خواتین کی ٹیم اولمپکس میں شرکت نہیں کرپائی تھی۔ الغیاشی کے بموجب اولمپکس میں مصر کا جھنڈا بلند ہونا ان کے لئے اعزاز ہے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT